چترال: لواری ٹنل کے قریب برفانی تودہ گرنے سے چھ ہلاک

تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images
Image caption چترال میں برفانی تودے گرنے کے واقعات عام ہیں (فائل فوٹو)

پاکستان کے صوبے خیبر پختونخوا کے ضلع چترال میں لواری ٹنل کے قریب زیارت کے علاقے میں برفانی تودہ گرنے سے کم سے کم چھ افراد دب کر ہلاک ہو گئے ہیں جبکہ کئی زخمی ہیں۔

اتوار کو برفانی تودہ لواری ٹنل میں کام کرنے والے مزدورں کی ورکشاپ پر گرا۔

مقامی صحافی انور شاہ کے مطابق حکام نے بتایا ہے کہ ملبے سے اب تک سات زخمیوں کو نکالا گیا ہے، جن میں سے ایک کی حالت تشویشناک ہے۔ زخمیوں کو ہسپتال منتقل کیا جا رہا ہے۔

چترال کے ڈپٹی کمشنر نے بی بی سی کو بتایا کہ ٹنل میں کام کرنے والے کوریا کی کمپنی سامبو کے ورکشاپ پر برفانی تودہ گرا جہاں چودہ مزدور موجود تھے۔ جس میں چھ مزدور ہلاک ہوگئے ہیں۔ انھوں نے بتایا کہ ہلاک ہونے والے مزدورں کا تعلق پنجاب سے ہیں جبکہ سات زخمی افراد کو نکالا گیا ہے اور ایک مزدور کی تلاش جاری ہے۔

انتظامیہ کے مطابق چترال سکاوٹ ،دیر لیوئیز کے اہلکارامدادی کارروائیوں میں حصہ لے رہے ہیں تاہم شدید بارش کے باعث امدادی کاموں میں مشکلات کا سامنا ہے۔

انھوں نے بتایا کہ برفانی تودے کے ملبے کو کرینکوں کے ذریعے ہٹایا جارہا ہے۔

پی ڈی ایم اے کے ترجمان کے مطابق ملبے تل دبنے والے پانچ افراد کی لاشیں نکال لی گئی ہیں جبکہ ریسکیو آپریشن جاری ہے۔

خیال رہے کہ چند روز قبل بھی چترال میں برفانی تودے گرنے کے دو مختلف واقعات میں تیرہ سے زیادہ افراد ہلاک ہوگئے تھے۔

اسی بارے میں