'راجیش کھنّہ بڑے شرمیلے تھے' وحیدہ رحمان

تصویر کے کاپی رائٹ Bollywood
Image caption وحیدہ رحمن نے ابتدائی دور میں راجیش کھنہ کے ساتھ فلم خاموشی میں کام کیا تھا

بالی وڈ کی فلم اداکارہ وحیدہ رحمان کا کہنا ہے کہ انڈین فلم انڈسٹری کے پہلے سپر سٹار رجیش کھنّہ بہت ہی شرمیلے اور خاموش طبیعت کے انسان تھے۔

وحیدہ رحمان نے ابتدائی دور میں راجیش کھنہ کے ساتھ فلم میں کام کیا تھا اور انھوں نے بی بی سی کے ساتھ اپنے تجربات شیئر کیے۔

میری راجیش کھنہ سے پہلی ملاقات فلم 'خاموشی' کے سیٹ پر ہوئی تھی۔ اس وقت وہ فلموں میں نئے نئے آئے تھے۔

وہ بہت ہی خاموش اور شرمیلی طبیعت کے انسان تھے۔ زیادہ باتیں نہیں کرتے تھے۔

تصویر کے کاپی رائٹ JUNIOR MEHMOOD
Image caption راجیش کھنہ بڑے آسان طریقے سے رہا کرتے تھے اور کسی کو علم بھی نہیں تھا کہ یہ لڑکا اتنا بڑا سٹار بننے والا ہے

پھر فلم کی شوٹنگ کے لیے ہم کولکتہ گئے۔ وہاں فلم کی ساری یونٹ نے ایک ہی ہوٹل میں قیام کیا۔ تب تھوڑی تھوڑی ان سے ملاقات ہونے لگی اور وہ کچھ کھلنے لگے۔

راجیش کھنہ ان دنوں بڑے آسان طریقے سے رہا کرتے تھے۔ کسی کو علم بھی نہیں تھا کہ یہ لڑکا اتنا بڑا سٹار بننے والا ہے۔

بہت کم لوگوں کو معلوم ہے کہ فلم 'خاموشی' کے لیے ڈائریکٹر ہیمنت کمار کو میں نے راجیش کھنہ کا نام تجویز کیا تھا۔ اس وقت ان کی فلم 'آخری خط' ریلیز ہو چکی تھی۔

دراصل 'خاموشی' ایک ہیروئن کے کردار پر مرکوز فلم تھی۔ اس لیے اس فلم میں اس وقت کا کوئی بڑا سٹار کام کرنے کے لیے تیار نہیں تھا۔ ہیمنت دا دیو آنند کو لینا چاہتے تھے، لیکن بات بنی نہیں۔

تصویر کے کاپی رائٹ JUNIOR MEHMOOD
Image caption فلم 'خاموشی' کے بعد آہستہ آہستہ وہ بڑے سٹار بننے لگے، ان کی اداکارہ شرمیلا ٹیگور اور ممتاز کے ساتھ جوڑی زیادہ جمنے لگی

میں نے ہیمنت دا سے کہا کہ یہ جو نیا لڑکا آیا ہے، یہ ٹھیک ہے۔ اسے لے سکتے ہیں اور انھوں نے بات مان لی۔

فلم 'خاموشی' کی شوٹنگ کا ایک دلچسپ واقعہ ہے۔ ہم اس نغمے 'وہ شام کچھ عجیب تھی' کی شوٹنگ کر رہے تھے اور راجیش کھنہ نغمے کی دھن بار بار بھول رہے تھے۔ تو لپ سنک کرنے میں مشکل ہو رہی تھی۔

گانے کے منظر میں مجھے ان کو گلے لگنا تھا۔ انھوں نے مجھ سے کہا: 'وحیدہ جی جب کیمرہ میرے چہرے پر آئے اور آپ کی پیٹھ پر تب آپ نغمہ گنگنا دینا جس سے مجھے اس کے الفاظ پکڑنے میں آسانی ہو جائے گی۔ وہ اکثر نغمے کی دھن پکڑ نہیں پاتے تھے۔'

فلم 'خاموشی' کے بعد آہستہ آہستہ وہ بڑے سٹار بننے لگے۔ ان کی اداکارہ شرمیلا ٹیگور اور ممتاز کے ساتھ جوڑی زیادہ جمنے لگی۔

تصویر کے کاپی رائٹ JUNIOR MAHMOOD
Image caption راجیش کھنّہ بہت ہی سادہ قسم کے انسان تھے، لیکن ان میں کوئی جادو تھا کہ ہر عمر کا انسان ان کی طرف كھچا چلا آتا تھا۔

میں سنجیدہ قسم کی فلمیں زیادہ کرتی تھی اور بطور اداکارہ میرا کیریئر آہستہ آہستہ ختم ہو رہا تھا تو میں نے ان کے ساتھ زیادہ فلمیں نہیں کیں۔

وہ بہت ہی سادہ قسم کے انسان تھے۔ لیکن ان میں کوئی جادو تھا۔ ہر عمر کا انسان ان کی طرف كھنچا چلا آتا تھا۔ ان کی اس کشش کی وضاحت کرنا مشکل ہے۔

بہت سے لوگ انہیں موڈی قسم کا آرٹسٹ کہتے تھے۔ لیکن ایسا نہیں تھا۔ ہم فنکاروں کے ساتھ مشکل یہ ہے کہ میڈیا والے سمجھتے نہیں کہ ہماری بھی ذاتی زندگی ہوتی ہے۔

کئی بار ہم اپنے ذاتی مسائل کی وجہ سے پریشان رہتے ہیں، اور سیٹ پر کئی بار غم و غصے کا اظہار کر دیتے ہیں، یا فرض کریں کسی وجہ سے سپاٹ بوائے یا یونٹ کے کسی رکن کو ڈانٹ دیا تو لوگ رائی کا پہاڑ بنا دیتے ہیں۔

کہنے لگتے ہیں کہ بڑے غصے والا آرٹسٹ ہے۔ موڈی ہے۔ بعض موقعوں پر ان کے بھی ایسے ہی برتاؤ کو لوگوں نے غلط تاثر لیا۔ انھیں بھی موڈی قرار دیا۔ جبکہ وہ ایسے بالکل نہیں تھے۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں