اداکارہ روینہ ٹنڈن کی فلموں میں واپسی

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption فلم کی کہانی دہلی میں ہونے والے ریپ کے ایک غیر حقیقی واقعے پر مبنی ہے

بالی وڈ کی اداکارہ روینہ ٹنڈن فلم 'ماتر' سے ایک بار پھر بڑے پردے پر واپسی کر رہی ہیں، فلم کا ٹریلر لانچ کر دیا گيا ہے اور امکان ہے کہ 21 اپریل کو یہ فلم ریلیز ہو گی۔

اس فلم کے ہدایت کار اشتر سعید ہیں۔ 'ماتر' کا جو ٹریلر ریلیز ہوا ہے اس میں روینہ ٹنڈن ٹریلر ایکشن کرتی نظر آ رہی ہیں۔

فلم کی کہانی دہلی میں ہونے والے ریپ کے ایک غیر حقیقی واقعے پر مبنی ہے۔ ٹریلر میں اخبار کی ایک هیڈلائن میں لکھا ہے: 'ڈیلهی دی ریپ کیپٹل آف انڈیا۔'

اس سے متعلق ایک سوال کے جواب میں روینہ ٹنڈن کہتی ہیں: 'میں یہ نہیں کہوں گی کہ دہلی میں پولیس نظام درست نہیں ہے، اگر آپ کسی بھی ریاست کے اعداد و شمار کو دیکھیں گے تو آپ جانیں گے کہ اس طرح کے واقعات ہر ریاست میں ہوتے رہتے ہیں۔ ہاں، دہلی میں کچھ ایسے خوفناک واقعات ہوئے جن پر میڈیا نے کچھ زیادہ توجہ دی۔ آپ یہ بھی کہہ سکتے ہیں کہ دہلی کا میڈیا زیادہ بیدار ہے۔'

تصویر کے کاپی رائٹ CRISPY BOLLYWOOD
Image caption خواتین کے تئیں مردوں کا جو عام طور پر نظریہ ہوتا ہے اس سے متعلق بھی انھوں نے بات کی

خواتین کے حوالے سے مردوں کا جو عام طور پر نظریہ ہوتا ہے اس سے متعلق بھی انھوں نے بات کی۔

روینہ نے کہا: 'ہم عورتوں کو بچپن سے ہی اپنے بچوں کو کمزور لوگوں کی مدد کرنا سکھانا ضروری۔ ہم بچپن سے ہی اپنے لڑکوں کو یہ تعلیم دیں کہ جو خاتون آپ کے ساتھ میں بیٹھی ہے وہ کسی کی بہن، کسی کی بیٹی یا کسی کی ماں یا پھر آپ کی دوست ہے۔ یہ نہ سوچیں کہ ارے یہ تو دوسرے گھروں میں ہوتا ہے تو ہم اس کی پراوہ کیوں کریں۔ یہ فکر بدلنی چاہیے۔'

اس فلم میں روینہ کے ساتھ علیشا خان اور مدھر متّل نے بھی کام کیا ہے۔

روینہ اس فلم میں اس لڑکی کی ماں کا کردار کر رہی ہیں جس کا دلی میں ریپ ہوتا ہے اور پھر اس لڑکی کی موت ہو جاتی ہے۔ لیکن ماں انصاف کے لیے لڑتی رہتی ہے۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں