میز پر گائے کا نہیں بھینس کا گوشت تھا: کاجول

کاجول تصویر کے کاپی رائٹ Red chillies

ہندی فلموں کی ہیروئن کاجول نے ایک ٹویٹ کے ذریعے گائے کے گوشت کے حوالے سے وضاحت جاری کی ہے۔

کاجول نے ٹوئٹر پر لکھا ہے، 'ایک دوست کے گھر پر لنچ کی ویڈیو ہے جس کے بارے میں کہا جا رہا ہے کہ میز پر گوشت بھی تھا. لیکن یہ غلط فہمی ہے۔'

٭'مسلمان گائے کا گوشت ترک کرکے پہل کریں'

تصویر کے کاپی رائٹ Twitter

انھوں نے مزید لکھا، 'وہاں بھینس کا گوشت تھا جو بازار سے آپ قانونی طریقے سے خرید سکتے ہیں۔ میں یہ وضاحت اس لیے دے رہی ہوں کیونکہ یہ حساس معاملہ ہے جس سے لوگوں کی مذہبی جذبات مجروح ہو سکتے ہیں. میرا ارادہ یہ بالکل نہیں ہے ۔'

کاجول کے اس ٹویٹ کے بعد سے لوگ بھی اپنی اپنی رائے دے رہے ہیں۔

تصویر کے کاپی رائٹ Twitter

prash_realtruth نے لکھا، ’ہم آپ پر اعتبار کرتے ہیں، پر سوچیے اگر آپ کو ثابت کرنے کے لیے کہا جائے؟ یا پھر غلط وجوہات پر آپ پر حملے کی زد میں آ جائیں؟‘

@ to0ot87 ٹویٹ کرتے ہیں، ’آپ جو کھانا چاہتے ہیں کھائیں، یہ آپ کی چوائس ہے .... صرف آپ کی۔‘

جبکہ نریش جین نے ٹویٹ کیا ہے کہ ’ایسی چیز کھائیں ہی کیوں جس پر وضاحت دینی پڑے۔‘

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں