سنی لیونی نے گوشت کھانا کیوں چھوڑا؟

تصویر کے کاپی رائٹ Sunny Leone\Twitter
Image caption سنی لیونی جانوروں کے حقوق کے حق میں بولتی ہیں

بالی وڈ اداکارہ سنی لیونی نے جانوروں کے حقوق کی حمایت کرنے والی تنظیم پیٹا کے ساتھ مل کر ایک کیلینڈر لانچ کیا ہے۔

کیلینڈر لانچ کرتے ہوئے سنی لیونی نے گوشت چھوڑ کر ویجیٹیریئن بننے کے ذاتی تجربات کے بارے میں بھی بتایا۔

سنی لیونی کہتی ہیں کہ ان سے ملنے والے بہت سے لوگ پوچھتے ہیں کہ کیا ان کے لیے گوشت چھوڑنا مشکل نہیں، تو وہ کہتی ہیں کہ نہیں یہ بہت آسان ہے۔

سنی نے اس کیلینڈر کی لانچ کے موقع پر اپنے ٹوئٹر پر ایک پیغام میں کہا ’آؤ خوراک میں تبدیلی لا کر موسمیاتی تبدیلی کا مقابلہ کریں۔ گو ویجیٹیریئن‘

تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images
Image caption ليونی کو آوارہ کتوں کو اپنانے کے حق میں بولنے کے لیے بھی جانا جاتا ہے

ویجیٹیریئن بننےسے وزن بھی کم

سنی لیونی کہتی ہیں کہ گوشت چھوڑ کر صرف سبزیاں کھانے سے ان کو ایک فائدہ یہ بھی ہوا کہ ان کا وزن کم ہو گیا ہے۔

وہ کہتی ہیں ایسا کرنے سے انہوں نے اپنے اندر زیادہ توانائی محسوس کی ہے۔

جانوروں کا درد محسوس کریں

سنی لیونی کہتی ہیں کہ اگر آپ ویجیٹیریئن بننا چاہتے ہیں تو آپ کو وہ ویڈیوز دیکھنی چاہییں جو گوشت خوری کا شکار ہونے والے جانوروں کا درد بیان کرتی ہیں۔

سنی لیونی کو جانوروں کے حقوق کی حمایت کرنے کے لیے گذشتہ سال پیٹا نے ’پرسن آف دا ایئر‘ کے ایوارڈ سے بھی نوازا تھا۔

ليونی کو آوارہ کتوں کو اپنانے کے حق میں بولنے کے لیے بھی جانا جاتا ہے۔

اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں
بالی وڈ اداکارہ سنی لیونی کا کہنا ہے کہ وہ اپنے ماضی کے نقش کو مٹانا نہیں چاہتی ہیں

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں