’ایکشن فلمیں میرے بس کی بات نہیں‘

تصویر کے کاپی رائٹ PR Agency
Image caption اگنی پتھ کے ری میک میں وجے دینا ناتھ چوہان کا مشہور کردار ہریتھک روشن ادا کریں گے

بالی وڈ کے مشہور فلمساز اور ہدایتکار کرن جوہر کا کہنا ہے کہ ’اگنی پتھ‘ جیسی تشدد اور مار دھاڑ سے بھرپور فلموں کی ہدایتکاری ان کے بس کی بات نہیں ہے۔

اگنی پتھ سنہ انیس سو نوے کی ایک سپر ہٹ فلم تھی جس کے فلمساز کرن جوہر کے والد یش جوہر تھے اور اس کی ہدایتکاری کے فرائض مکل آنند نے انجام دیے تھے۔

جب کرن اس فلم کا ’ری میک‘ بنا رہے ہیں تاہم ’کچھ کچھ ہوتا ہے‘ ، ’کبھی خوشی کبھی غم‘ ، ’کبھی الوداع نہ کہنا‘ ، ’مائی نیم از خان‘ ، اور ’دوستانہ‘ جیسی مقبول فلمیں بنانے والے کرن جوہر خود اس کی ہدایتکاری پر تیار نہیں ہیں۔

اگنی پتھ کے ری میک میں ہدایتکاری کا فریضہ نوآموز ہدایتکار کرن ملہوترا کو سونپا گیا ہے۔

ممبئی میں نئی ’​اگنی پتھ‘ کے پرومو لانچ کے موقع پر کرن جوہر نے تسلیم کیا کہ یہ فلم ان کی کمپنی، دھرما پروڈکشن ، کے بینر تلے بننے والی دیگر فلموں سے الگ ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ ’میں کبھی بھی اس طرح کی فلم کی ہدایتکاری نہیں کر سکتا تھا۔ میری فلموں میں ایكشن کا صرف ایک ہی منظر رہا ہے جب ’ کبھی خوشی کبھی غم‘ میں امیتابھ بچن ہریتك روشن کو تھپڑ مارتے ہیں۔ ایکشن یا تشدد کی بات کریں تو اگنی پتھ کے ري میك میں ایک تھپڑ سے کہیں زیادہ تشدد ہے‘۔

انہوں نے کہا کہ ’ سنہ 1998 یعنی جب سے میں دھرما پروڈكشن میں آیا ہوں، ہم نے ایسی فلم نہیں بنائی ہے‘۔

کرن جوہر اور ڈائریکٹر کرن ملہوترا کے خیال میں نام کے علاوہ نئی اور پرانی اگنی پتھ میں کوئی یکسانیت نہیں ہے۔ کرن ملہوترا کہتے ہیں کہ ’فلم کا پلاٹ وہی ہے. یہ فلم بھی پرانی فلم کی ہی طرح ماڈوا میں شروع ہوکر وہیں ختم ہوتی ہے. لیکن اس کے علاوہ سب کچھ نیا اور مختلف ہے‘۔

کرن جوہر کا بھی یہی کہنا ہے کہ ان کی فلم پرانی اگنی پتھ کا ري میك نہیں ہے۔ انہوں نے کہا ،’یہ فلم مكل آنند اور یش جوہر کو ہمارا خراجِ تحیسن ہے۔ امیتابھ بچن ان لوگوں میں سے ہیں جنہیں میں سب سے پہلے یہ فلم دکھانا چاہوں گا اور مجھے یقین ہے کہ انہیں یہ فلم ضرور پسند آئے گی‘۔