اردو سیسمی، سم سم ہمارا

تصویر کے کاپی رائٹ BBC World Service
Image caption پروگرام سیسمی سٹریٹ کے نقشے پر تیار کیا گیا ہے لیکن اس کے اجزا اور مواد سب پاکستانی ہیں: عثمان پیر زادہ

پاکستان کے صوبہ پنجاب کے دارالحکومت لاہور میں رفیع پیر تھیٹر نے امریکہ میں بچوں کے مقبول پروگرام سیسمی سٹریٹ کو پاکستانی بچوں کے لیے مقامی رنگ میں پیش کرنے کا بیڑا اٹھایا ہے۔

بچوں کے معروف پروگرام سیسمی سٹریٹ کو اُردو میں پیش کرنے کی اولین کوشش آج سے پنتیس برس قبل شعیب ہاشمی اور ان کی ٹیم نے کی تھی لیکن وہ اس وقت محدود ذرائع کا بلیک اینڈ وائٹ ٹیلی ویژن کا تھا اس لیے پروگرام کی مقبولیت بھی محدود ہی رہی۔

اب لاکھوں ڈالر کے سرمایے سے بچوں کا یہی پروگرام رفیع پیر تھیٹر ورکشاپ کی طرف سے پیش کیا جا رہا ہے اور مالی تعاون امریکہ کے ترقیاتی امداد دینے والے ادارے یو ایس ایڈ کی جانب سے کیا گیا ہے۔

لاہور میں اس کی افتتاحی تقریب کے موقع پر ورکشاپ کے کرتا دھرتا عثمان پیر زادہ نے بتایا کہ اس پروگرام کا بنیادی مقصد تعلیمی ہے اور رفیع پیر تھیٹر کافی عرصہ سے اس طرح کے پروگرام کر رہا ہے جس میں بچوں کو کھیل کے ذریعے تعلیم دی جا سکے، خاص طور پر ایسے بچوں کو جنہیں تعلیم کی پوری سہولیات میسر نہیں یہ ان کے لیے قبل از سکول کا تعلیمی پروگرام ہے۔

عثمان پیر زادہ نے کہا یہ پروگرام سیسمی سٹریٹ کے نقشے پر تیار کیا گیا ہے لیکن اس کے اجزا اور مواد سب پاکستانی ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ پُتلی تماشے کا آرٹ جو کہ پاکستان میں ختم ہو رہا ہے رفیع پیر تھیٹر نے اس کے فروخ کی خاطر یہ پروگرام شروع کیا ہے اور ایک خوبصورت پُتلی تماشے کا میوزیم بھی بنایا ہے ۔

تقریب میں موجود سیسمی سٹریٹ کی سینیئر نائب صدر ڈاکٹر شارلٹ کول نے کہا کہ اس پروگرام سے بچوں کو بنیادی حروف تہجی اور گنتی سیکھنے میں مدد ملے گئی اور انہیں اپنی تہذیب اور ثقافت کے بارے میں بھی آگاہی حاصل ہو گی۔

تصویر کے کاپی رائٹ BBC World Service
Image caption پاکستانی پروگرام میں اصل سیسمی سٹریٹ کا صرف ایک کردار’ایلمو‘ جوں کا توں لیا گیا ہے

اُن کا کہنا تھا کہ بچے اس پروگرام کے ذریعے لائیو ایکشن فلم دیکھ سکیں گے اور ساتھ ساتھ یہ بھی جان سکیں گے کہ ملک کے دیگر حصوں میں بچے کس طرح رہتے ہیں۔

بچوں کے اس تعلیمی و تفریحی پاکستانی پروگرام کا نام ہے سم سم ہمارا۔یہ ایک سوتیس اقساط پر مشتمل ہے اور اسے اردو کے ساتھ ساتھ چار علاقائی زبانوں میں بھی پیش کیا جائے گا۔

یہ پروگرام ریڈیو پر بھی نشر ہو گا اور اس کے ساتھ ساتھ ایسے علاقے جہاں کسی بھی قسم کی نشریات نہیں موصول نہیں ہوتیں وہاں براہ راست پتلی تماشے کا شو پیش کیا جائے گا اور اس کے علاوہ ویب سائٹ کے ذریعے بھی پروگرامز تک رسائی حاصل کی جا سکے گی۔

یہ بات قابل ذکر ہے کہ پاکستانی پروگرام میں اصل سیسمی سٹریٹ کا صرف ایک کردار’ایلمو‘ جوں کا توں لیا گیا ہے جبکہ باقی تمام کردار یعنی رانی، مُنا، باجی، بیلی، اور حسین و جمیل جالصتاً پاکستانی معاشرے سے تعلق رکھتے ہیں۔

اسی بارے میں