بی بی سی کے سٹار صحافیوں کی تنخواہ میں کمی

بی بی سی کا دفتر تصویر کے کاپی رائٹ BBC World Service
Image caption بی بی سی کے بورڈ کے ممبران کی مجموعی تنخواہیں ستاون لاکھ چودہ ہزار پاؤنڈ سے کم ہو کر پچیس لاکھ ساٹھ ہزار ہو گئ۔

بی بی سی نے اپنے نامور صحافیوں کی تنخواہوں میں 95 لاکھ پاؤنڈ کی کمی کی ہے۔

پچھلے مالی سال کے دوران بی بی سی نے نامور صحافیوں اور ’ ٹیلنٹ‘ کے شعبہ میں 20 کروڑ تیس لاکھ پاؤنڈز خرچ کیے تھے۔

بی بی سی کی سالانہ رپورٹ کے مطابق پچھلے سال صرف سولہ افراد ایسے تھے جن کو پانچ لاکھ پاؤنڈ سے زائد تنخواہ دی گئی۔

سال دو ہزار گیارہ اور بارہ میں ڈائریکٹر جنرل مارک تھامسن نے چھ لاکھ بائیس ہزار پاؤنڈ تنخواہ لی جو کہ پچھلے سال کی تنخواہ سات لاکھ نواسی ہزار پاؤنڈ سے کافی کم ہے۔ لیکن اس کے ساتھ ہی ان کی تنخواہ بی بی سی کے ایک درمیانے درجے کے ملازم سے پندرہ گنا زیادہ ہے۔

بی بی سی کے بورڈ کے ممبران کی مجموعی تنخواہیں ستاون لاکھ چودہ ہزار پاؤنڈ سے کم ہو کر پچیس لاکھ ساٹھ ہزار ہو گئیں ہیں۔ اس کی ایک بنیادی وجہ یہ ہے کہ بورڈ کے ممبران کی تعداد تیرہ سے کم ہو کر سات رہ گئی ہے۔

اسی سالانہ رپورٹ نے بی بی سی کے پروڈکشن کے شعبہ کا بھی جائزہ پیش کیا ہے۔ رپورٹ کے مطابق ٹی وی ڈرامہ کی نشریات پورے بی بی سی پر ایک سو چھپن گھنٹے کم ہوئیں جبکہ ریڈیو ڈرامہ کی نشریات ایک واضع اضافہ کے ساتھ چار سو انیس گھنٹے بڑھی ہیں۔

ٹی وی پر تفریح کے پروگراموں کی نشریات میں چار سو ستر گھنٹے اور ریڈیو پر پانچ سو اڑسٹھ گھنٹے اضافہ ہوا۔ موسیقی اور آرٹ کے پروگراموں کی نشریات میں نوے گھنٹوں کی کمی ہوئی۔

ٹی وی پر دکھائے جانے والے کھیلوں کی نشریات میں تین سو نواسی گھنٹوں اور ریڈیو پر چھ سو دو گھنٹوں کی کمی ہوئی۔

اسی بارے میں