نیوز ویک کا آخری پرنٹ ایڈیشن

آخری وقت اشاعت:  پير 24 دسمبر 2012 ,‭ 14:02 GMT 19:02 PST

اسی برس سے شائع ہونے والے حالات حاضرہ کے امریکی جریدے نیوز ویک نے اپنے آخری پرنٹ ایڈیشن کے صفحہِ اول کی رونمائی کی ہے۔

نیویارک میں مین ہیٹن ہیڈ کوارٹر کی سیاہ و سفید تصویر آخری شائع ہونے والے ایڈیشن کے سرِ ورق پر موجود ہے۔

مشہور امریکی جریدے نے اشتہارات سے ہونے والی آمدن میں کمی اور قارعین کے آن لائن منتقل ہونے کی وجہ سے پرنٹ ایڈیشن ختم کیا ہے۔

سالِ نو سے نیوز ویک کا صرف ڈیجیٹل ایڈیشن ہی شائع ہو گا۔

جریدے کی مدیر ٹینا براؤن نے اس اقدم کو ایک ’ نیا باب‘ قرار دیا ہے۔ انھوں نے اپنے خط میں لکھا ہے کہ ’ یہ ایک روایتی میگزین نہیں ہے۔ اسی روح کو مدِنظر رکھتے ہوئے ہم یہ قدم اٹھا رہے ہیں جو کہ مسلسل تبدیلی کی علامت ہے ۔ہم ڈیجیٹل دنیا میں آغاز کر رہے ہیں جس کی جانب ہمارے حریف بھی وقت گزرنے کے ساتھ اسی جذبے سے آئیں گے۔‘

ٹینا براؤن دو سال قبل روزنامہ ’دی ڈیلی بیسٹ‘ کے نیوز ویک میں ضم ہونے کے بعد میگزین کی ایڈیٹر بنی تھیں۔ نیوز ویک کی ایڈیٹر نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر پرنٹ ہونے والے آخری شمارے کا سرِورق جاری کیا۔

ڈیجیٹل ایڈیشن شائع کرنے سے نیوز ویک کے اخراجات میں کمی آئی گی۔ جس میں چھپوائی، ترسیل اور ڈاک کی لاگت بھی کم ہو گی۔جبکہ پرنٹ ہونے والے اشتہارات سے ہونے والی آمدن میں بھی کمی آئی گی۔

نیوز ویک کا پہلا شمارہ سترہ فروری انیس سو تینتیس میں شائع ہوا اور سات دن کی سات خبریں اور سات تصاویر کے اس میگزین نے فوری پذیرائی حاصل کی۔ اگرچہ نیوز ویک اپنے حریف ٹائم میگزین کے مقابلے میں دوسرے نمبر پر رہا لیکن انیس سو ساٹھ میں سماجی حقوق کی تحریک کی کوریج پر نیوز ویک نمایاں جریدے کے طور پر ابھرا۔

نیوز ویک کی تیس لاکھ کاپیاں فروخت ہوتی تھیں لیکن اشتہارات سے آنے والی آمدن اور قارعین کی تعداد میں کمی کے باعث میگزین کو خسارے کا سامنا تھا۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔