اسامہ بن لادن پر مبنی فلم کا اچھا آغاز

آخری وقت اشاعت:  منگل 25 دسمبر 2012 ,‭ 01:24 GMT 06:24 PST

توقع کی جا رہی ہے کہ یہ فلم آسکر ایوارڈ جیت لے گی

اسامہ بن لادن کو تلاش کرنے کے لیے سی آئی اے کی کوششوں پر مبنی سنسنی خیز فلم زیرو ڈارک تھرٹی نے عمدہ بزنس کیا ہے۔

ڈائریکٹر کیتھرین بِگلو کی اس فلم کے بارے میں توقع کی جا رہی ہے کہ یہ آسکر انعام جیت سکتی ہے۔

2009 میں بگلو کی فلم ہرٹ لاکر نے بہترین فلم کا آسکر ایوارڈ جیتا تھا، ساتھ ہی بگلو کو بھی بہترین ڈائریکٹر کا آسکر ملا تھا۔

فی الحال اس فلم کو صرف پانچ سینماؤں میں دکھایا گیا ہے، لیکن اس کے باوجود اس فلم نے اختتامِ ہفتہ چار لاکھ دس ہزار ڈالر کما لیے تھے۔

ان میں سے ہر سینما ہاؤس فل تھا اور فلم کو فی سینما 82 ہزار ڈالر حاصل ہوئے۔ اس کے مقابلے پر ٹام کروز کی فلم جیک ریچر کو فی سینما صرف 4654 ڈالر ملے۔

اس دوران فلم ہوبٹ، دی ان ایکسپیکٹڈ جرنی دوسرے ہفتے بھی امریکی باکس آفس پر سرِفہرست ہے۔

ڈائریکٹر پیٹر جیکسن کی فلم نے اختتامِ ہفتہ پر تین کروڑ 67 لاکھ ڈالر کا بزنس کر کے اپنے حریفوں کو پیچھے چھوڑ دیا۔

دوسرے نمبر پر ٹام کروز کی ایکشن فلم جیک ریچر رہی، جس نے ایک کروڑ 56 لاکھ ڈالر کمائے۔

تاہم ہوبٹ کی آمدنی میں گذشتہ ہفتے کے مقابلے پر کمی کا مطلب یہ ہے کہ اسے لارڈ آف دا رِنگز سلسلے کے آخری فلم جتنی کامیابی ملنا مشکل ہے۔ گذشتہ ہفتے ہوبٹ نے آٹھ کروڑ 48 لاکھ ڈالر کا بزنس کیا تھا۔

2003 میں ریلیز ہونے کے بعد ریٹرن آف دا کنگ نے دنیا بھر میں ایک ارب 20 کروڑ ڈالر کمائے تھے۔ اس وقت یہ دنیا کی سب سے زیادہ بزنس کرنے والی فلم تھا۔ تاہم بعد میں ایواٹار اور ہیری پاٹر اینڈ دا ڈیتھلی ہیلوز پارٹ ٹو نے اس کا ریکارڈ توڑ دیا تھا۔

باکس آفس کے تجزیہ کاروں کا کہنا ہے کہ ہوبٹ کی آمدنی میں کمی کرسمس کی خریداری کے ہجوم کی وجہ سے آئی ہے۔

جیک ریچر میں ٹام کروز نے ایک ایسے پولیس اہل کار کا کردار ادا کیا ہے جو قانون ہاتھ میں لے لیتا ہے

ہالی وڈ ڈاٹ کام کے پال ڈیرگارابیڈین کا کہنا ہے، ’اس ہفتے کی اصل فاتح چھٹیوں کے دوران ہونے والی خریداری ہے۔‘

ٹام کروز کی فلم کی آمدنی بھی توقعات سے کم رہی۔ اس نے مشن امپاسبل 4 سے تقریباً آدھا بزنس کیا جو گذشتہ برس انھی دنوں میں ریلیز کی گئی تھی۔

یہ فلم لی چائلڈ کے کردار جیک ریچر پر مبنی ہے۔ یہ ایک ایسا سابق سپاہی اور فوجی پولیس مین ہے جو قانون کے دائرے سے باہر رہتا ہے اور مجرموں کو خود ہی سزا دیتا ہے۔

اس فلم کا سکرپٹ آسکرانعام یافتہ کرسٹوفر میک کویری نے تحریر کیا ہے۔ فلم کو ناقدین سے اچھا ردِ عمل ملا ہے، حالاں کہ اس بارے میں ٹام کروز کی وجہ سے خدشات تھے کیوں کہ انھوں نے ناول کے ساڑھے چھ فٹ لمبے ہیرو کا کردار ادا کیا ہے جب کہ ان کا اپنا قد پانچ فٹ سات انچ ہے۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔