’بھارت میں مسلمان ہونے کے باعث کچھ مشکلات‘

آخری وقت اشاعت:  پير 28 جنوری 2013 ,‭ 12:18 GMT 17:18 PST
شاہ رخ خان

شاہ رخ خان کو دوبار امریکہ کے ہوائی اڈے پر پوچھ گچھ کے لیے روکا گیا ہے

بھارتی اداکار شاہ رخ خان نے ایک جریدے کو انٹرویو دیتے ہوئے کہا ہے کہ ہندوستان میں مسلمان ہونے کے باعث انھیں بعض مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔

چند روز قبل شاہ رخ خان نے ’آوٹ لک ٹرننگ پوائنٹس‘ نامی ایک میگزین کو انٹرویو دیتے ہوئے کہا تھا کہ ہندوستان میں مسلمان ہونے کے باعث انھیں بعض مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔

شاہ رخ خان نے اپنے انٹرویو میں کہا تھا کہ امریکہ پر ہونے والے گیارہ ستمبر کے حملوں کے بعد کے ماحول میں بھارت میں مسلمان ہونا ایک بڑا مسئلہ ہوگیا ہے۔

انہوں نے کہا ہے ’میں کبھی کبھی بغیر کسی وجہ کے ان سیاستدانوں کے نشانے پر ہوتا ہوں جو یہ سمجھتے ہیں کہ بھارت میں موجود جو بھی مسلمان غلط یا قوم کے خلاف ہیں میں ان کی مثال ہوں۔ مجھ پر کئی بار اس طرح کے بھی الزامات لگائے گئے ہیں کہ اپنے ملک سے زيادہ پڑوسی ملک کے ساتھ ہمدردی رکھتا ہوں۔‘

خیال کیا جا رہا ہے کہ شاہ رخ خان نے یہ بیان ’ان سخت گیر ہندو نظریاتی تنظیموں یا لیڈروں‘ سے متعلق دیا تھا جو کئی بار شاہ رخ خان کی حب الوطنی پر سوال اٹھاچکے ہیں۔

اب شاہ رخ خان کے اس بیان پر فیس بک اور ٹوئٹر پر بھی دھواں دھار مباحثہ جاری ہے۔ فیس بک پر بعض لوگوں کا کہنا ہے کہ شاہ رخ کو جس ملک اور عوام نے اتنی عزت اور وقار دیا، وہ اسی پر سوال اٹھارہے ہیں۔ وہیں بعض کا کہنا ہے کہ جب شاہ رخ بھارت میں مسلمان ہونے پر غیر محفوظ محسوس کرتے ہیں تو پھر عام مسلمانوں کا کیا حال ہوگا۔

شاہ رخ خان کبھی اپنے بیانات تو کبھی خود پر لگائے الزامات کے سبب اکثر تنازعات کی زد میں رہے ہیں۔ شاہ رخ خان کی شناخت اور ان کی حب الوطنی پر اس وقت بھی سوال اٹھایا گیا تھا جب ہندو نظریاتی تنظیم شیو سینا کے سربراہ بال ٹھاکرے نے کہا تھا کہ شاہ رخ خان کو پاکستان چلے جانا چاہیے۔

اس سے قبل شاہ رخ خان کو دو بار امریکہ کے ہوائی اڈے پر تفصیلی پوچھ گچھ کے لیے روکا گیا تھا جس کے بعد پورے ملک میں زبردست ناراضگی کا اظہار کیا تھا اور امریکی حکام نےدونوں بار اپنی غلطی کا اعتراف کیا تھا۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔