نیومی واٹس کی فلم ڈیانا تنقید کی زد میں

Image caption فلم جمعرات کو لندن کے سینماؤں میں نمائش کے لیے پیش کی جائِے گی جس میں ڈیانا کا کردار اداکارہ نیومی واٹس نے ادا کیا ہے

برطانیہ کی شہزادی ڈیانا کی زندگی پر بنی فلم ’ڈیانا‘ پر شدید تنقید ہو رہی ہے جس میں اداکارہ نیومی واٹس نے ڈیانا کا کردار ادا کیا ہے۔

یہ فلم جمعرات کو لندن کے سینماؤں میں نمائش کے لیے پیش کی جائِے گی۔

اس فلم میں بھارتی نژاد اداکار نوین اینڈریوز نے ماہرِ امراضِ دل ڈاکٹر حسنات خان کا کردار ادا کیا ہے، جن سے شہزادی ڈیانا کا دو سال تک معاشقہ چلتا رہا تھا۔

فلم بنانے والی کمپنی کا کہنا ہے کہ انھوں نے ڈیانا کی زندگی کے آخری برسوں کے بارے میں ایک ’گہری اور حساس فلم‘ بنانے کا بیڑا اٹھایا تھا۔ تاہم ناقدین نے اسے ’خوفناک اور دخل اندازی کرنے والی‘ فلم قرار دیا ہے۔

مختلف ناقدین نے فلم کو روکھی پھیکی قرار دیا ہے اور ایک ناقد نے ڈیلی میل میں لکھا کہ ’فلم اتنی سنسنی خیز یا بری نہیں ہے جتنا کہ خدشہ تھا لیکن اس میں شاہی خاندان کو کچھ زیادہ ہی دکھایا گیا ہے۔‘

دی امپاسبل اور 21 گرام میں اداکاری پر آسکر کے لیے میں نامزد ہونے والی نیومی واٹس کو بھی تنقید کا سامنا ہے۔

Image caption ناقدین میں سے کئی کا کہنا ہے نیومی واٹس ڈیانا جیسی بالکل نہیں لگتیں

اخبار دی مرر کے ڈیوڈ ایڈورڈز نے لکھا کہ ’واٹس نہ ویلز کی شہزادی جیسی دکھائی دیتی ہیں اور نہ اداکاری کرتی ہیں اور نہ وہ ویسی محسوس ہوتی ہیں۔ سنہری بالوں والی وِگ میں امریکی اداکارہ ویزلی سنِپس زیادہ قابل اعتماد لگتیں۔‘

دی انڈی پینڈینٹ اخبار کے جیفری میکنب نے واٹس کی ’بہتر اداکاری‘ کی تعریف کی ہے لیکن کہتے ہیں کہ 44 سالہ واٹس اس کردار جیسی نہیں لگتیں جسے وہ ادا کر رہی ہیں۔‘

وہ لکھتے ہیں ’فلم کی جو بات مایوس کرتی ہے وہ یہ ہے کہ مزاج میں اچانک کئی تبدیلیاں آتی ہیں۔‘

تاہم دی ڈیلی ایکسپریس نے لکھا ہے کہ یہ ’اس خزاں میں دیکھنے کے لائق فلم ہے جو ناظرین کو رلا دے گی۔‘

اسی بارے میں