ہر چیز پر پابندی حماقت ہے: سیف علی خان

Image caption بلٹ راجا میں سیف کے علاوہ سوناکشی سنہا ہیں جب کہ ہدایات تگمانشو دھولیہ نے دی ہیں

بالی وڈ کے معروف اداکار اپنی آنے والی فلم ’بلٹ راجہ‘ کے ٹریلر میں شان سے ہاتھ میں پستول لیے بچوں کے کھیل کی طرح لوگوں کا خون بہاتے اور قتل و غارت گری کرتے نظر آ رہے ہیں اور اس دوران وہ اپنے دوستوں سے ہنسی مذاق بھی کرتے ہیں۔

وہ اس فلم میں ایک مجرم کا کردار ادا کر رہے ہیں۔ جب ان سے صحافیوں نے پوچھا کہ کہ آیا یہ جرم کی حوصلہ فزائی نہیں ہے تو انھوں نے کہا: ’نہیں، بالکل نہیں۔ اس سے دس گنا زیادہ تشدد ويڈيوگیمز میں ہوتا ہے جسے بچے دھڑلے سے کھیلتے ہیں لیکن فلموں کو سافٹ ٹارگٹ بنا دیا جاتا ہے اور بعض اوقات انھی وجوہ کے بنا پر کسی فلم پر پابندی لگا دی جاتی ہے یا پھر کبھی سین کاٹنے کا حکم صادر کر دیا جاتا ہے۔‘

سیف کے مطابق پابندی لگانا کسی مسئلے کا حل نہیں ہے۔

انہوں نے کہا: ’ایسا تو ہے نہیں کہ لوگ فلم دیکھ کر گن ہاتھ میں لے کر سڑکوں پر قتل عام کرنے نکل پڑیں گے۔ ہر بات پر قدغن لگانا تو حماقت ہے۔ لوگوں کی اپنی سمجھ بھی کوئی چیز ہوتی ہے۔‘

فلم بلٹ راجہ میں سیف علی خان کے ساتھ سوناکشی سنہا اہم کردار ادا کر رہی ہیں اور اس کے ہدایت کار تگمانشو دھولیہ ہیں۔

فلم سے واسبتہ امیدوں کے بارے میں سیف نے کہا: ’فلم اچھی بنی ہے۔ لیکن ایسی فلموں سے آپ کو سو کروڑ روپے کی امید نہیں کرنی چاہیے۔ البتہ میں یہ چاہتا ہوں کہ فلم کافی کمائی کرے۔ یہ کمرشل فلم ہے۔ لیکن یہ تگمانشو کی فلم ہے جن میں ایک کلاس ہے۔ یہ عام کمرشل فلم نہیں ہے۔‘

سیف سے جب پوچھا گیا کہ وہ باکس آفس کے نتائج یا تجزیہ نگاروں کی تعریف میں سے کیا زیادہ پسند کرتے ہیں تو انھوں نے کہا: ’کتنا اچھا ہو کہ دونوں مل جائیں۔ 200 کروڑ روپے اور قومی ایوارڈ ایک ساتھ مل جائیں تو کیا بات ہے۔‘

Image caption یہ فلم 29 نومبر کو ریلیز ہو رہی ہے۔ اس فلم کے پروڈیوسر بھی سیف ہیں

کئی فلموں میں تجزیہ نگاروں کی تعریف اور ناظرین کی تعریف حاصل کرنے کے بعد بھی سیف علی خان کا نام عامر، سلمان اور شاہ رخ والی لیگ میں کیوں نہیں ہے؟

جواب میں سیف نے کہا: ’دیکھیے، وہ تینوں خان مجھ سے سینیئر ہیں۔ میں نے ان تینوں سے بہت کچھ سیکھا ہے۔ میں ان کی عزت کرتا ہوں۔ لیکن میں بھی اپنے آپ کو اچھی حالت میں پاتا ہوں اور مطمئن ہوں۔ میں اپنے کریئر کے پرسکون دور میں ہوں۔‘

سیف کو ممبئی میں شوٹنگ کرنا بالکل پسند نہیں ہے۔

وہ کہتے ہیں: ’مجھے اس شہر کی زندہ دلی بہت پسند ہے لیکن یہاں کا موسم بڑا تکلیف دہ ہے۔ اسی وجہ سے موسم گرما میں بطور خاص مجھے لندن جیسے شہر میں شوٹنگ کرنا پسند ہے جہاں ایک بار میک اپ کرایا اور دن بھر شوٹنگ کر لی۔‘

کیا سیف کی بیٹی سارا بھی فلموں میں کام کریں گی؟ اس سوال کے جواب میں سیف نے کہا: ’ابھی تو وہ اپنی تعلیم کے سلسلے میں امریکہ میں ہے۔ فلموں میں کام کرنے کے لیے پہلے اسے اپنا وزن کم کرنا پڑے گا کیونکہ وہ ماشاء اللہ خاصی صحت مند ہے۔‘

بلٹ راجہ 29 نومبر کو ریلیز ہو رہی ہے اور سیف اس کے فلم ساز بھی ہیں۔

اسی بارے میں