سوئمنگ پول میں بکینی ہی پہنوں گی برقع نہیں: سونم کپور

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption جو چیز مجھے پسند نہیں ہے، اسے میں ٹھکرا سکتی ہوں، اور میں نے ایسا کیا بھی ہے: سونم

بھارتی اداکار انیل کپور کی بیٹی سونم کپور کا کہنا ہے کہ فلمی خاندان سے آنے کی وجہ سے انہیں وہ تمام فائدے حاصل ہوئے ہیں جو باقی فنکاروں کو نہیں ملتے۔

بی بی سی ایشین نیٹ ورک سے بات کرتے ہوئے سونم نے کہا: ’لوگوں کو معلوم ہے کہ میں کس خاندان سے آئی ہوں، اس لیے باقی فنکاروں کے مقابلے میں وہ مجھ سے زیادہ ادب سے پیش آتے ہیں۔ میں ان کی مقابلے میں زیادہ آسان پوزیشن میں ہوں۔‘

سونم نے یہ بھی کہا کہ فلمی خاندانوں سے آئے دوسرے اداکار اپنے آپ کو ملنے والے اس فائدے کے بارے میں بات نہیں کرتے۔ ’فلمی بیک گراؤنڈ ہونے سے فائدہ تو ملتا ہے۔ دوسرے آرٹسٹ شاید یہ باتیں چھپا جاتے ہیں۔ لیکن میں سمجھتی ہوں کہ اس سے فائدہ ہوتا ہے۔‘

سونم نے یہ بھی کہا کہ ان پر اپنا گھر چلانے کی ذمہ داری نہیں ہے اس وجہ سے وہ زیادہ سوچ سمجھ کر اپنے لیے فلموں کا انتخاب کرتی ہیں۔

سونم کپور کا کہنا تھا: ’میرے پاس یہ لگژري ہے۔ جو چیز مجھے پسند نہیں ہے، اسے میں ٹھکرا سکتی ہوں۔ اور میں نے ایسا کیا بھی ہے۔ ’’رانجھنا‘‘ میں کام کرنے کے لیے میں نے تین بڑے بینروں کی فلمیں ٹھكرائیں۔‘

سونم نے بتایا کہ ان کے والد کو لگتا ہے کہ ’کوئی لڑکا میرے لیے پرفیکٹ ہے ہی نہیں، اور میں ہی سب سے اچھی ہوں۔ لیکن شاید ہر والدین کو اپنے بچے سب سے اچھے لگتے ہیں۔‘

سونم کپور کی آنے والی فلم یش راج بینر کی ’بیوقوفياں‘ ہیں جس میں ان کے ساتھ ايشمان ہیں۔ اس فلم میں رشی کپور سونم کے والد بنے ہیں۔

فلم میں سونم نے بکینی پہنی ہے جس کے بارے میں کافی بحث ہو رہی ہے۔

وہ اپنے اس فیصلے کا دفاع کرتے ہوئے کہتی ہیں: ’میں فلم میں ایک ماڈرن لڑکی کا کردار ادا کر رہی ہوں۔ فلم میں سوئمنگ پول کا منظر ہے۔ اس میں میں کوئی برقع تو پہنوں گی نہیں۔ بکینی ہی پہنوں گی۔‘

’بیوقوفياں‘ کے علاوہ سونم کپور فلم ’خوبصورت‘ میں بھی کام کر رہی ہیں جسے ان کی بہن ریا کپور بنا رہی ہیں۔ یہ فلم 80 کی دہائی میں بنی فلم کا ری میک ہے۔

اسی بارے میں