آسکرز ایوارڈز: 12 ایئرز اے سلیو بہترین فلم

تصویر کے کاپی رائٹ Kevin Winter Getty Images
Image caption بہترین معاون اداکارہ کا ایوارڈ نئی اداکارہ لوپیٹا نیونگو کو12 ایئرز اے سلیو میں کردار پر ملا ہے

ہالی وڈ کی معروف ترین ایوارڈز تقریب آسکرز میں جہاں تاریخی فلم ’12 ایئرز اے سلیو‘ بہترین فلم قرار پائی تو وہیں خلائی فلم ’گریویٹی‘ کو سب سے زیادہ انعامات ملے۔

آسکرز ایوارڈز کی تقریب امریکی شہر لاس اینجلس میں منعقد کی گئي جہاں گریوٹی، امریکن ہسّل اور 12 ایئرز اے سلیو بہترین فلم کے انعام کے لیے مقابلے میں تھیں۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ گذشتہ کئی برسوں کی نسبت اس سال ’بہترین فلم‘ کی دوڑ میں مقابلہ بہت سخت تھا۔

فلم گریوٹی کے لیے الفونسو کوارون کو بہترین ہدایت کار کا ایوارڈ ملا۔ یہ اس فلم کے لیے چھٹا انعام تھا۔

آسکرز:’امریکن ہسل‘،’گریویٹی‘ کی دس نامزدگیاں

بہترین اداکارہ کا ایوارڈ فلم ’بلو جیزمِن‘ میں مرکزی کردار ادا کرنے والی اداکارہ کیٹ بلانچٹ کو ملا ہے۔ جبکہ بہترین اداکار کا انعام فلم ’ڈیلس بائرز کلب‘ میں اداکاری کے لیے میتھیو میک کونہے کو دیا گیا۔

واضح رہے کہ مسلسل دوسری بار بہترین فلم اور بہترین اداکار کے ایوارڈز علیحدہ علیحدہ فلموں کو ملے ہیں۔

گریویٹی کو کل دس نامزدگیوں میں سات میں کامیابی حاصل ہوئی ہے، جن میں بہترین ہدایت کار کا ایوارڈ بھی شامل ہے۔

ہدایت کار الفانسو نے اپنی فلم گریویٹی کی کامیابی کا سہرا اداکارہ سانڈرا بولک کے سر باندھتے ہوئے کہا کہ ان کی فلم کی جان وہی تھیں۔

بہترین معاون اداکار کے لیے فلم ’ڈیلس بائرز کلب‘ کے جیرڈ لیٹو نے انعام جیتا جبکہ بہترین اینی میٹڈ فلم کا اعزاز ’فروزن‘ نے حاصل کیا۔

بہترین معاون اداکارہ کا ایوارڈ نئی اداکارہ لوپیٹا نیونگو کو12 ایئرز اے سلیو میں کردار پر ملا ہے۔

یہ آسکر ایوارڈز کی 86 ویں تقریب تھی اور اسے لاس اینجلس کے ڈولبی تھیٹر میں منعقد کیا گیا۔ گذشتہ سال 85ویں ایوارڈز میں 44 آسکر انعامات دیے گئے تھے۔

اس سال کی تقریب کی میزبانی مزاحیہ فنکار ایلن ڈی جینیرس نے کی۔ انھوں نے دوسری بار آسکرز کی میزبانی کی۔

فلم گریویٹی خلائی سفر کے بارے میں ہے اور اسے تھری ڈی میں بھی ریلیز کیا گیا تھا۔ باکس آفس میں گریوٹی اس سال کی کامیاب ترین فلم رہی ہے۔

بہترین فلم کے اعزاز سے سرفراز فلم 12 ایئرز اے سلیو کے ہدایت کار سٹیو میک کوین نے اس فلم کی کامیابی ان لوگوں کے نام معنون کی ہے جنھوں نے غلامی کی زندگی گزاری ہے۔

مجموعی طور پر ’گریویٹی‘ کو سات، فلم ’12 ایئرز اے سلیو‘ اور ’ڈیلس بائرز کلب‘ کو تین تین ایوارڈز ملے جبکہ ’فروزن‘ اور ’گریٹ گیٹسبی‘ کو دو دو اور ’بلو جیزمِن‘ اور ’ہر‘ کو ایک ایک انعامات ملے۔

اس سال غير ملکي فلموں کي فہرست ميں عمر نامي ايک فلسطيني فلم بھي نامزد ہوئی تھی لیکن بازی اطالوی فلم ’دا گریٹ بیوٹی‘ کے ہاتھوں میں رہی۔

لاس اینجلس میں بی بی سی بات کرتے ہوئے فلم انڈسٹری کے مشہور رسالے ’دی ہالی وُڈ رپورٹر‘ کے نمائندے سکاٹ فینبرگ کا کہنا تھا کہ ’ماہرین کی رائے بڑی منقسم تھی کہ کون سی فلم جیتے گی۔‘

اسی بارے میں