سوناکشی کا کرارا جواب اور مدر ٹریسا بننے کی خواہش

اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

سوناکشی نے مہیش بھٹ کو لاجواب کر دیا

تصویر کے کاپی رائٹ AFP AND HOTURE
Image caption سوناكشي کے والد اداکار شتروگھن سنہا پٹنہ صاحب سے بھارتیہ جنتا پارٹی کے رہنما ہیں

بالی وڈ اداکارہ سوناکشی سنہا نے معروف فلم ساز مہیش بھٹ کو لا جواب کر دیا۔

دراصل ممبئی پولیس نے متنازع کامیڈی شو اے آئي بی روسٹ میں حصہ لینے کے لیے اداکارہ دیپکا پاڈوکون، عالیہ بھٹ، اداکار ارجن کپور اور رنویر سنگھ کے خلاف ایف آئی آر درج کی ہے۔

ان پر مبینہ طور پر عوامی طور پر فحش اور بھدی زبان کا استعمال کرنے کے الزام میں مقدمہ درج کیا گیا ہے۔

اس شو میں سوناکشی سنہا بھی موجود تھیں، لیکن ایف آئی آر میں ان کا نام نہیں ہے۔

مہیش بھٹ نے اسی بابت ایک نجی چینل سے بات کرتے ہوئے کہا: ’اگر چار ہزار شائقین کا کسی بات پر ہنسنا گناہ ہے تو ایف آئی آر میں سب لوگوں کا نام کیوں نہیں ہے۔ سوناکشی سنہا کا نام ایف آئی آر میں کیوں نہیں ہے۔‘

انہوں نے کہا: ’کیا اس لیے کیونکہ وہ ایک ایسے شخص کی بیٹی ہیں جو موجودہ نظام کا حصہ ہے؟‘

تصویر کے کاپی رائٹ AFP AND HOTURE
Image caption جبکہ مہیش بھٹ اداکارہ عالیہ بھٹ کے والد اور معروف فلم ساز ہیں

واضح رہے کہ سوناكشي کے والد اداکار شتروگھن سنہا پٹنہ صاحب سے بھارتیہ جنتا پارٹی کے رکن پارلیمان ہیں۔

سوناكشي نے مہیش بھٹ کے اس بیان پر ٹویٹ کرتے ہوئے لکھا: ’مہیش بھٹ جی! ممبئی میں دائر اس ایف آئی آر سے پہلے دہلی اور کولکتہ میں بھی اسی طرح کی ایف آئی آر درج کی گئی تھی جن میں میرا نام تھا، عالیہ کا نہیں۔‘

انہوں نے مزید لکھا: ’تب تو میرے والد نے یہ سوال نہیں اٹھایا کہ میرا نام ایف آئی آر میں کیوں ہے؟ لیکن ہاں میں آپ کی اس بات سے اتفاق کرتی ہوں کہ شو میں موجود تمام لوگوں کے نام ایف آئی آر میں کیوں نہیں ہیں؟‘

سوناكشي نے لکھا: ’ہنسنے کی وجہ سے میں نے آج تک کسی کو جیل جاتے نہیں دیکھا۔‘

شری رام راگھون کی پہلی پسند دیپکا

تصویر کے کاپی رائٹ AFP

بالی وڈ ہدایت کار شری رام راگھون کا کہنا ہے کہ سیف علی خان اور کرینہ کپور ساتھ بنائی جانے والی ان کی فلم ناکام ہو گئی تھی ورنہ وہ اس فلم ’ایجنٹ ونود‘ کا سیکوئل بھی بناتے۔

لیکن مستقبل میں وہ خاتون کے مرکزی کردار والی ایک فلم بنانا چاہتے ہیں جس کے لیے ان کی پہلی پسند دیپکا پاڈوکون ہیں۔

انھوں نے اپنی آنے والی فلم ’بدلہ پور‘ کی ریلیز سے قبل بی بی سی کے ساتھ خصوصی بات چیت میں یہ خیال ظاہر کیا ہے۔

انھوں نے کہا: ’بڑے سٹارز کے ساتھ کام کرنے پر فلم اور ہدایتکار پر پیسہ کمانے کا دباؤ ہوتا ہے اور کئی بار کہانی کے ساتھ سمجھوتہ کرنا پڑتا ہے۔‘

راگھون کے مطابق بعض اوقات ایک آزاد فلم ساز کے ساتھ کام کرنا بہتر ہوتا ہے۔

انھوں نے دیپکا کے ساتھ والی فلم کی تفصیل تو نہیں بتائي لیکن ایسا لگتا ہے کہ اس کے لیے انھیں کسی آزاد فلم ساز کی تلاش ہے۔

شری رام راگھون کی فلم ’بدلہ پور‘ 20 فروری کو ریلیز ہو رہی ہے۔ اس میں ورون دھون اور يامي گوتم کے اہم کردار ہیں۔

جیکلین کی مدر ٹریسا کا کردار ادا کرنے کی خواہش

تصویر کے کاپی رائٹ
Image caption جیکلین فرنانڈیز سری لنکا کی باشندہ ہیں

سلمان خان کی فلم ’کک‘ سے فلم سازوں کی نظر انتخاب میں آنے والی اداکارہ جیکلین فرنانڈیز کا کہنا ہے کہ وہ مدر ٹریسا کا کردار ادا کرنا چاہیں گی۔

واضح رہے کہ نوبل انعام یافتہ مدر ٹریسا نے ضعیفوں، بے سہاراؤں اور بیماروں کی خدمت میں اپنی زندگی لگا دی تھی۔

سری لنکا کی حسینہ جیکلین نے یہ باتیں اپنی فلم ’رائے‘ کے پروموشن کے دوران ایک سوال کے جواب میں کہی۔

کسی بایوپک میں کام کرنے کے بارے میں انھوں نے کہا: ’اگر مجھے کوئی بایوپک کرنی ہوگی تو میں مدر ٹریسا کا کردار ادا کرنا پسند کروں گی۔‘

انھوں نے کہا کہ ’یہ بہت دلچسپ تجربہ ہوگا۔۔۔ کیونکہ مجھے ان کے بارے میں بہت کچھ سیکھنے کو ملے گا۔ میرے خیال میں وہ ہندوستانی تاریخ میں انتہائی اہم شخصیت رہی ہیں۔‘

بھارت میں ان دنوں بایوپک کا چلن بڑھ رہا ہے اور حال ہی میں پرینکا چوپڑہ کی فلم ’میری کوم‘ کو بہت سراہا گیا ہے۔

اسی بارے میں