جیکی چین منشیات فروشوں کو سزائے موت دینے کے حق میں

تصویر کے کاپی رائٹ
Image caption بعض معاملات میں جیکی چین سزائے موت کی حمایت کرتے ہیں

معروف اداکار جیکی چین نے کہا کہ وہ منشیات کے چند مجرموں کو سزائے موت دینے کے حق میں ہیں۔

جیکی چین کے بیٹے بھی منشیات رکھنے کے کیس میں قید کی سزا کاٹ چکے ہیں۔

گذشتہ سال اگست میں جیسی چین کو چین کے دارالحکومت بیجنگ سے ان کی رہائش گاہ سے گرفتار کیا گیا تھا اور ان کے گھر سے ایک سوگرام کی منشیات برآمد ہوئی تھیں۔

جیکی چین کے مطابق منشیات ہزاروں بچوں کو نقصان پہنچا رہی ہے۔

جیکی چین کو سنہ 2009 میں بیجنگ کے لیے ’نارکوٹکس کنٹرول امبیسیڈر‘ یعنی منشیات کے استعال کے خلاف مہم کا سفیر مقرر دیا تھا اور اب انھیں سنگاپور میں منشیات کے خلاف مہم کا سفیر قرار دیا گیا ہے۔

چین اور سنگاپور میں منشیات کی سمگلنگ کے جرم میں سزائے موت دی جاتی ہے۔

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption جیکی چین کے بیٹے بھی منشیات رکھنے کے کیس میں قید کی سزا کاٹ چکے ہیں

جیکی چین نے صحافیوں سے بات کرتے ہوئے کہا منشیات نہ صرف جوان لوگوں کو نقصان پہنچاتی ہے بلکہ ان کے خاندان کو بھی نقصان پہنچا۔

انھوں نے کہا کہ بعض معاملات میں وہ سزائے موت کی حمایت کرتے ہیں۔

’جب آپ ہزاروں لاکھ بچوں کو نقصان پہنچا رہے ہیں تو میرے خیال میں یہ لوگ بے فائدہ ہیں اور انھیں صحیح سزا دی جانی چاہیے۔ نوجوان کہتے ہیں کہ یہ سگریٹ کی طرح ٹھیک ہے لیکن یہ ٹھیک نہیں، میرے خاندان کے لیے نہیں۔‘

جیکی چین نے اپنے بیٹے کے جیل جانے کے بارے میں بات کرتے ہوئے کہا کہ اس واقعے پر وہ شرمندہ ہیں اور انھیں صدمہ ہوا ہے اور اب وہ اپنے بیٹے پر زیادہ توجہ دیتے ہیں۔

اسی بارے میں