وینس فلم فیسٹیول میں لاطینی امریکی فلموں کی دھوم

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption دیس دے الا لارینزو ویگاس کی پہلی فیچر فلم تھی جس کے لیے انھیں گولڈن لائن ایوارڈ سے نوازا گیا

وینزویلا کے شہر کیراکس میں بدنظمی اور تشدد پر مبنی فلم ’دیس دے الا‘ یعنی ’دور سے‘ کو وینس فلم فسٹیول میں گولڈن لائن ایوارڈ سے نوازا گيا ہے۔

اپنی پہلی فیچر فلم میں ڈائریکٹر لارینزو ویگاس ایک ایسے رئیس کی کہانی بیان کرتے ہیں جو شہر کے ایک گینگ سے تعلق رکھنے والے ایک نوجوان کے ساتھ جنسی طور پر ملوث ہوجاتا ہے۔

وینس فلم فیسٹیول کا اعلیٰ ترین اعزاز حاصل کرنے کے بعد انھوں نے کہا ’میں یہ انعام اپنے حیرت انگیز ملک وینزویلا کو منسوب کرنا چاہتا ہوں۔‘

انھوں نے کہا ’ہمیں معلوم ہے کہ ہمارے یہاں چند مسائل ہیں اور جب ہم ان کے بارے میں بات کریں گے تو ہم ان کو ختم کر سکتے ہیں۔‘

خیال رہے کہ وینزويلا شدید معاشی بحران سے گزر رہا ہے اور گذشتہ سال اس کی وجہ سے مظاہرے ہوئے تھے۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption بہترین اداکارہ کا ایوارڈ اٹلی کی ویلیریا گولینو کو فلم ’پر امور ووسٹرو‘ کے لیے دیا گیا

گذشتہ جمعرات کو ہی وینزویلا میں حزب اختلاف کے اہم رہنما لیوپولڈو لوپیز کو تشدد بھڑکانے کے جرم میں 13 سال اور نو مہینہ قید کی سزا سنائی گئی ہے۔

ویگاس نے کہا کہ فلمیں ’لاطینی امریکی ممالک کو اپنی ماضی کی غلطیوں سے سبق لینے میں تعاون کر سکتی ہیں۔‘

دوسری جانب ارجنٹائن کی فلم ’دا کلان‘ کے ڈائریکٹر پابلو تراپیرو کو بہترین ہدایت کاری کے لیے دوسرا اہم ایوارڈ ’سلور لائن‘ دیا گیا۔

یہ فلم ارجنٹائن میں پھیلے جرائم پر مبنی تھریلر ہے اور یہ ارجنٹائن کی کامیاب ترین فلموں میں شامل رہی ہے۔ فلم بیونس آئرس کی ایک عام فیملی کی سچی کہانی پر مبنی ہے جو کہ دولت مند افراد کو قتل کرنے سے پہلے تاوان کے لیے اغوا کر لیتی تھی۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption ارجنٹائن کی فلم ’دا کلان‘ کے ڈائریکٹر پابلو تراپیرو کو بہترین ہدایت کاری کے لیے دوسرا اہم ایوارڈ ’سلور لائن‘ دیا گیا

میکسیکو کے ڈائریکٹر الفانسو رواں سال وینس فلم فیسٹیول میں جیوری کے صدر تھے۔

انھوں نے کہا کہ انھیں اس بات پر خوشی ہے کہ لاطینی امریکی فلموں نے اعزاز حاصل کیا اور یہ محض ’ایک اتفاق ہے‘ کہ جیوری کی سربراہی میکسیکو کے ایک باشندے کے ہاتھ میں تھی۔

گرانڈ جیوری کا دوسرا انعام امریکی کامیڈی فلم ’ فینٹسی انومیلیسا‘ کو ملا جس کی ہدایت کاری ڈیوک جانسن اور چارلی کوف مین نے کی تھی۔

تصویر کے کاپی رائٹ EPA
Image caption وینس فلم فیسٹیول کے رنگ

بہترین اداکار کا انعام فرانس کے فیبرس لوچینی کو دیا گیا جنھوں نے کرسٹیئن ونسنٹ کی فلم ’لا ہرمائن‘ میں جج کا کردار ادا کیا تھا۔

بہترین اداکارہ کا ایوارڈ اٹلی کی ویلیریا گولینو کو فلم ’پر امور ووسٹرو‘ کے لیے دیا گیا۔

اسی بارے میں