’محبت اور جنگ میں سب جائز‘

Image caption کنگنا اور رتک روشن کے درمیان اختلافات نے انھیں قانونی چارہ جوئی تک پہنچا دیا ہے

بالی وڈ اداکارہ کنگنا راناوت اور رِتک روشن کی مبینہ محبت کی داستان عام ہوکر کچہری تک پہنچ گئی ہے۔ رِتک روشن اور اداکارہ کنگنا نے اس کہاوت کو سچ ثابت کرنے میں کوئی کسر نہیں چھوڑ رکھی ہے کہ ’محبت اور جنگ میں سب جائز‘ ہے۔

ماڈرن زمانہ ہے تو اپنے اس مبینہ بریک اپ کے بعد پہلے دونوں نے ٹوئٹر پر ایک دوسرے کو زیر کرنے کی کوشش کی اور جب اتنے سے بھی دل نہیں بھرا تو قانونی نوٹس بھیجے گئے۔

بالی وڈ راؤنڈ اپ سننے کے لیے کلک کریں

کہا جاتا ہے کہ کنگنا اور رِیتک نے اب تک اپنی نزدیکیوں اور رشتے کو چھپا کر رکھا تھا۔ کنگنا کا الزام ہے کہ انھیں فلم ’عاشقی تھری‘ سے نکلوانےمیں رِیتک کا ہاتھ ہے اور ایک پریس کانفرنس میں کنگنا نے رِیتک کو ’سلی ایکس‘ کہہ کر پکارتے ہوئے کہا کہ وہ اب زندگی میں آگے بڑھ چکی ہیں۔

اس کے جواب میں رِتک نے ایک ٹویٹ میں ’عشق کے لیے کنگنا پر پوپ کو ترجیح دی‘۔ جواب میں کنگنا کی ایک دوست نے ان دونوں کے مبینہ رشتے کی مکمل کہانی نے روزنامہ مبئی مرر کے سامنے پیش کردی اور بتایا کہ اپنی طلاق کے بعد رِیتک نے سنہ 2014 میں پیرس میں کنگنا کو شادی کی پیشکش بھی کی تھی۔

لیکن کچھ ہی عرصے بعد وہ بدل گئے۔ اب ریتک کی باری تھی انھوں نے بھی انھیں وکیل کے ذریعے نوٹس بھجوا دیا اور الزام لگایا کہ کنگنا نے انھیں اب تک 1439 ای میلز لکھی ہیں۔ دونوں کے درمیان الزامات اور جوابی الزامات کا سلسلہ ابھی جاری ہے۔ دیکھتے ہیں کہ آخری تھپڑ کس کا ہوگا!

اسے کہتے ہیں پروفیشنلزم

تصویر کے کاپی رائٹ Anurag basu
Image caption رنبیر کپور اور قطرینہ کیف اپنی فلم جگا جاسوس کی شوٹنگ میں مصروف ہیں

ویسے روایت تو یہ ہے کہ بالی ووڈ میں لوگ کھل کر محبت کا اقرار نہیں کرتے اور نہ ہی بریک اپ کو عام کرتے ہیں۔

کنگنا اور رِیتک سے مبینہ بریک اپ کی ایک اور کہانی یاد آگئی۔ رنبیر کپور اور قطرینہ کیف کیف کی، جو گہری دوستی کے بعد الگ الگ نظر آ رہے تھے لیکن اب فلم ’جگا جاسوس‘ کی شوٹنگ میں مصروف ہیں۔

پھر بھی فلم کے سیٹ سے یہ خبریں گردش کر رہی ہیں کہ فلم کا کام اب بھی رکا ہوا ہے اور قطرینہ اور رنبیر ایک دوسرے کے ساتھ بات چیت نہیں کرتے۔

ان خبروں سے تنگ آکر آخر کار فلم ’کپور اینڈ سنز‘ کی سکریننگ کے موقعے پر خاموشی توڑتے ہوئے رنبیر کپور نے ایک سوال کے جواب میں ان خبروں کو مسترد کرتے ہوئے کہا کہ فلم کی کچھ ہی دن کی شوٹنگ باقی ہے اور قطرینہ اور وہ پوری محنت کے ساتھ شوٹنگ میں مصروف ہیں۔دیکھیں اسے کہتے ہیں پروفیشنلزم۔

تشار پر کوئی مخصوص ٹیگ نہیں

تصویر کے کاپی رائٹ Raindrop media
Image caption تشار کو سیکس کامیڈی میں زیادہ نظر آ رہے ہیں

اداکار تشار کپور کہتے ہیں کہ اس سال ہولی کے تہوار کے بعد ان کے وہ تمام ذہنی دباؤ ختم ہو جائیں گے جو سینسر بورڈ نے ان کی حالیہ فلموں کے حوالے سے انہیں دیے ہیں۔

رواں سال جنوری میں تشار کی دو فلمیں ریلیز ہوئی تھیں ’مستی زادے‘ اور’ کیا کول ہیں ہم تھری‘۔ ان فلموں پر سینسر بورڈ نے بے شمار کٹ اور بیپس کا مطالبہ کیا تھا۔

اب تشار سے کوئی پوچھے کہ بھائی اگر ایسی ایسی سیکس کامیڈی پر مبنی فلمیں کریں گے تو سینسر بورڈ سے ٹینشن نہیں تو کیا شاباشی ملے گی؟

تشار نے زیادہ تر اسی اقسام کی فلمیں کی ہیں اور ان پر اس طرح کی فلموں کا ٹیگ لگ چکا ہے۔

حیرانی کی بات تو یہ ہے کہ تشار کو لگتا ہے کہ ان کی امیج تبدیل ہوتی رہتی ہے اور ان پر کوئی مخصوص ٹیگ نہیں ہے اور وہ ایک ’ورسٹائل ایکٹر‘ ہیں۔ لگتا ہے تشار حقیقی زندگی میں بھی کامیڈی کرتے ہیں۔

کوشش کرنے میں کوئی ہرج بھی نہیں

Image caption عامر خان کا خیال ہے کہ اگر وہ سنجیدہ کوشش کریں تو سلمان شادی کے لیے مان جائیں گے

سلمان خان کی شادی نہ صرف ان کے فینز بلکہ میڈیا اور انڈسٹری کے لوگوں کے لیے بھی زبردست دلچسپی کا موضوع ہے۔ میڈیا سلمان اور ان کے گھر والوں سے جب ان کی شادی کے بارے میں سوال پوچھ پوچھ کر تھک چکا تو اب یہی سوال ان کے دوستوں سے پوچھا جانے لگا۔

حال ہی میں اپنی 51 ویں سالگرہ کے موقعے پر عامر خان میڈیا سے بات کر رہے تھے کہ سلمان خان کا ذکر آیا اور بات پہنچی ان کی شادی تک۔

عامر کا کہنا تھا کہ وہ خود چاہتے ہیں کہ سلمان شادی کریں۔ عامر نے یہاں تک کہا کہ ابھی تک انھوں نے پوری کوشش نہیں کی لیکن اگر وہ کوشش کریں تو سلمان شاید شادی کے لیے رضا مند ہو جائیں۔

عامر صاحب آپ کو نہیں لگتا کہ اب کافی دیر ہو چکی ہے لیکن کوشش کرنے میں کوئی ہرج بھی نہیں ہے۔

اسی بارے میں