پولیس اہلکار کو موٹاپے کے تمسخر اڑانے والی ٹویٹ کا فائدہ، مفت سرجری ہو گئی

انڈیا تصویر کے کاپی رائٹ Saifee Hospital

انڈیا کے ایک معروف صحافی کی جانب سے ایک پولیس اہلکار کے موٹاپے کا مذاق اڑانے سے متعلق ٹویٹ کے غیر متوقع نتائج سامنے آئے ہیں اور اب ان کا وزن گھٹانے کےلیے ممبئی میں ان کی مفت سرجری کی جارہی ہے۔

انسپیکٹر دولت رام جاگوواٹ نے پیر کو ہسپتال سے جاتے ہوئے کالم نگار اور مصنفہ شوبھا ڈے کا شکریہ ادا کیا کہ ان کی وجہ سے رام جاگواٹ کو شہرت ملی۔

شوبھا ڈے نے انتخابات کے دوران دولت رام جاگواٹ کی ایک تصویر ٹویٹ کی اور اس پر لکھا کہ آج ممبئی میں پولیس کا ’بھاری انتظام‘ ہے۔

اس ٹویٹ کے وائرل ہونے کے بعد ممبئی کے سیفی ہسپتال نے ان کے علاج کا خرچہ دینے کی پیش کش کی۔

تصویر کے کاپی رائٹ SHOBHAA DE TWEET

ہسپتال کا کہنا ہے کہ سرجری کے بعد دولت رام جاگوواٹ کی حالت بہتر ہے۔ سرجری سے پہلے ان کا وزن 180 کلوگرام تھا لیکن امید ہے کہ سرجری کے بعد ایک سال کے عرصے میں دولت رام جاگوواٹ کا وزن کم ہو کر 100 کلو گرام رہ جائے گا۔

دولت رام جاگوواٹ نے اخبار ہندوستان ٹائمز سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ شوبھا ڈے کی ٹویٹ کی وجہ سے ان کو ’ممبئی آنے کا موقع بھی مل گیا‘۔ انھوں نے مزید کہا کہ ان کے وزن کی وجہ زیادہ کھانا نہیں بلکہ طبی پیچیدگیاں ہیں۔

’حقیقت یہ ہے کہ میرا وزن کبھی میرے اور میرے فرض کی راہ میں حائل نہیں ہوا اور نہ ہی یہ میری کارکردگی پر اثر انداز ہوا۔ میں جسمانی طور پر فعال ہوں اور میرا دماغ جرائم حل کرنے میں مدد کرتا ہے۔‘

شوبھا ڈے نے بعد میں اپنی ٹویٹ پر معذرت کی اور کہا کہ ان کا مقصد کسی کی دل آزاری کرنا نہیں تھا۔