امتحان میں کم نمبر آنے پر بھیک مانگنے کی سزا

تصویر کے کاپی رائٹ BBC World Service
Image caption پرکاش کا کہنا تھا کہ وہ اپنی بیٹی کو بتانا چاہتا تعلیم کے بغیر زندگی کتنی مشکل ہوتی ہے۔

بھارت کے جنوبی شہر میسور میں پولیس نے ایک دولت مند شخص کو اپنی بیٹی سے بھیک منگوانے کے جرم میں گرفتار کر لیا۔

پرکاش نامی اس شخص نے بھیک مانگنے کی یہ سزا اپنی بیٹی کو امتحانات میں کم نمبر آنے پر دی تھی۔

پرکاش کو بچوں سے بدسلوکی کے قانون کے تحت اس وقت گرفتار کیا گیا جب اس کے بیٹی ایک مندر کے باہر سکول کی وردی میں بھیک مانگ رہی تھی۔

پرکاش کا کہنا تھا کہ اس نے اپنی بیٹی کو کوئی جسمانی سزا نہیں دہ وہ بس چاہتا تھا اس کی بیٹی دیکھے کے ’تعلیم کے بغیر زندگی کتنی مشکل ہوتی ہے۔‘

بارہ سالہ لڑکی کو بچوں کی فلاح سے متعلق حکومتی ادارے کے حوالے کر دیا گیا۔

راہ گیروں نے جب بھیک مانگتے ہوئے اس لڑکی سے پوچھا گیا کہ تم ایسا کیوں کر رہی ہو تو اس نے قریب ہی اپنی گاڑی کے پاس بیٹھے اپنے باپ کی جانب اشارہ کردیا۔

مشتعل لوگوں کا ہجوم اس شخص کو پکڑ کر قریبی پولیس اسٹیشن لے گیا۔

اسی بارے میں