سیاچن:بھارتی ہیلی کاپٹر تباہ، پائلٹ ہلاک

سیاچن تصویر کے کاپی رائٹ
Image caption سیاچن گلیشیر بھارت اور پاکستان کے درمیان گزشتہ بیالیس سال سے متنازعہ مسئلہ ہے

بھارت اور پاکستان کے درمیان متنازع ہمالیائی گلیشیئر سیاچن پر ایک بھارتی ہیلی کاپٹرگر کر تباہ ہوگیا ہے۔

بھارتی فوج کا کہنا ہے کہ حادثہ میں پائلٹ ہلاک جبکہ معاون پائلٹ زخمی ہوا ہے۔

یہ حادثہ ایسے وقت پیش آیا ہے جب بھارتی وزیر داخلہ لداخ میں موجود تھے۔ واضح رہے بھارت کے زیرانتظام سیاچن گلیشیئر کا خطہ لداخ میں ہی واقع ہے۔

فوجی ترجمان لیفٹنٹ کرنل جوگندر سنگھ برار نے بی بی سی کو بتایا کہ ’ہمارا ایک چیتا ہیلی کاپٹر بدھ کے روز انتظامی مشن پر تھا کہ اچانک حادثہ کا شکار ہوا۔ اس میں پائلٹ ہلاک ہوگیا‘۔

ترجمان کے مطابق زخمی ہونے والے معاون پائلٹ کو علاج کے لیے چندی گڑھ منتقل کیا گیا ہے۔

فوجی حکام نے حادثہ کی وجوہات جاننے کے لیے تحقیقات کا اعلان کیا ہے۔

واضح رہے سیاچن گلیشئیر بھارت اور پاکستان کے درمیان پچھلے بیالیس سال سے متنازع ہے۔

سات اپریل کو اس ہمالیائی گلیشئر پر برفانی طوفان میں ایک سو چالیس پاکستانی فوجیوں کے دب جانے کے بعد سیاچن پر سمجھوتے کی باتیں ہونے لگی ہیں۔

پاکستان نے حال ہی میں اعلان کیا ہے گلیشئر پر دونوں ممالک کی پوزیشنوں کا تعین کرنے کے لئے گیارہ اور بارہ جون کو اسلام آباد میں مذاکرات ہونگے۔

پاکستانی فوج کے سربراہ اشفاق پرویز کیانی نے گزشتہ ماہ سیاچن پر نرم لہجہ اختیار کرتے ہوئے گلیشیئر سے فوجی انخلا کی تجویز پیش کی تھی، جس کا بھارت نے خیرمقدم کیا ہے۔

اسی بارے میں