ہماچل: آٹھ چینی شہری گرفتاری

آخری وقت اشاعت:  بدھ 13 جون 2012 ,‭ 09:35 GMT 14:35 PST

بھارت اور چین کے درمیان دلائی لامہ کے حوالے سے کشیدگی رہتی ہے

بھارتی ریاست ہماچل پردیش کی پولیس نے ویزا کی خلاف ورزیوں کے الزام میں ایک مذہبی مقام پر چھاپہ مار کر آٹھ چینی شہریوں کو گرفتار کیا ہے۔

پولیس نے یہ کارروائی منگل کی رات منڈی ضلع کے چونترا گاؤں میں کی جہاں ایک مذہبی مقام پر چھاپہ مارا گیا۔

پولیس کا دعویٰ ہے کہ اس نے گرفتار شدہ افراد سے تیس لاکھ روپے، تین ہزار امریکی ڈالر اور دیگر کرنسی سمیت اے ٹی ایم کارڈز بھی ضبط کیے ہیں۔

ان افراد کے پاس سے جو موبائل فون اور سم کارڈز برآمد ہوئے ہیں اس کے متعلق پولیس کو شک ہے کہ وہ چین کے ہیں۔

اس طرح کی خبریں نشر کی جا رہی تھیں کہ شاید یہ چین کے جاسوس ہیں لیکن ایڈیشنل ڈائریکٹر جنرل آف پولیس ایس آر مرڈی کا کہنا ہے کہ ابھی اس بارے میں کچھ بھی حتمی طور پر نہیں کہا جا سکتا۔

ان کا کہنا تھا کہ پولیس اور انٹیلیجنس ایجنسیز ان افراد سے پوچھ گچھ کر رہی ہیں اور تفتیش کی تکمیل سے پہلے کچھ بھی کہنا درست نہیں ہوگا۔

اطلاعات کے مطابق ان افراد کی گرفتاری ایک ایسے وقت میں ہوئی ہے جب بدھ مذہبی پیشوا دلائی لامہ کو قتل کرنے کی سازش کے بارے میں ایک بار پھر باتیں کی جا رہی ہیں۔

پولیس کا کہنا ہے کہ یہ چینی شہری ٹورسٹ ویزے پر تھے اور یہ بات سمجھ سے باہر ہے کہ آحر وہ اس دور دراز والے گاؤں میں اس طرح کا ٹھکانہ تلاش کرنے میں کیسے کامیاب ہوئے۔

اسی بارے میں

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔