سرحد پار سے دہشتگردی کا بڑا خطرہ ہے، بھارت

آخری وقت اشاعت:  منگل 6 نومبر 2012 ,‭ 12:11 GMT 17:11 PST
سوشیل کمار شندے

بھارتی وزیر داخلہ انٹر پول کی جنرل اسبملی سے خطاب کر رہے تھے

بھارتی وزیرداخلہ سوشیل کمار شندے کا کہنا ہے کہ پڑوسی ملک دہشتگردوں کے لیے محفوظ پناہ گاہ ہے اور بھارت کو سرحد پار سے دہشتگردی کا بڑا خطرہ لاحق ہے۔

بھارتی وزیر داخلہ نے پاکستان کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ ’اس سلسلے میں پڑوسی ملک سے بات چيت کا بھی کوئی نتیجہ نہیں نکلا ہے‘۔

بھارتی وزیر داخلہ سشیل کمار شندے اٹلی کے دارالحکومت روم میں انٹر پول کی جنرل اسمبلی سے خطاب کرتے ہوئے یہ باتیں کہیں۔

ان کا کہنا تھا بھارت کو کئی جانب سے اب بھی دہشتگردی کا، خاص طور پر سرحد پار سے، بڑا خطرہ لاحق رہتا ہے۔ انہوں نہ کہا ’جنوبی ایشیاء میں دہشتگردی حکمت علی کے طور پر تیزی سے ایک موثر ہتھیار بن کر ابھری ہے۔‘

بھارتی خبر رساں ادارے پریس ٹرسٹ آف انڈیا کے مطابق بھارتی وزیر داخلہ نے سنہ انیس سو ترانوے کے ممبئی میں ہوئے بم حملوں کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ مرتکبین کے بارے میں پڑوسی ملک سے کئی بار بات ہوئی ہے اور اس سے متعلق شواہد بھی فراہم کیے گئے لیکن کوئی نتیجہ نہیں نکلا۔

انہوں نے کہا ’پڑوسی ملک میں ان کی موجودگی کے بارے میں اچھی معلومات ہیں اور ان کے خلاف، جو بھارتی شہری ہیں، انٹرپول کی ریڈ نوٹسسز انیس سو ترانوے سے پڑی ہوئی ہیں۔‘

بھارتی وزیر داخلہ کا اشارہ داؤد ابرہیم کا طرف تھا جس کے متعلق بھارت کا دعویٰ ہے کہ وہ پاکستان میں ہیں جبکہ پاکستان اس دعوے کو مسترد کرتا رہا ہے۔

سنہ انیس سو ترانوے میں ممبئی میں سلسلہ وار بم دھماکے ہوئے تھے جس میں ڈھائی سو سے زیادہ افراد ہلاک ہوئے تھے۔

"پڑوسی ملک میں ان کی موجودگی کے بارے میں اچھی معلومات ہیں اور ان کے خلاف، جو بھارتی شہری ہیں، انٹرپول کی ریڈ نوٹسسز انیس سو ترانوے سے پڑی ہوئی ہیں۔"

بھارتی وزیر داخلہ کا کہنا تھا ’بھارت کی ایسے دہشت گردوں کے خلاف ایک سو اڑتیس نوٹسز پینڈنگ میں ہیں جو ملک سے فرار ہیں اور امکان ہے کہ انہوں نے بیرون ملک پناہ لے رکھی ہے۔‘

سوشیل کمار شندے نے کہا دہشتگرد معمولی چالوں اور عام ہتھیاروں سے زبردست نقصان پہنچانے کی صلاحیت رکھتے ہیں جیسا کہ چھبیس نومبر دو ہزار آٹھ کے ممبئی حملے میں دیکھنے کو ملا۔

ان کا کہنا تھا ’دہشت گردوں نے ہماری طرز زندگی میں خوف پھیلا کر افرا تفری مچانے کی کوشش کی ہے۔ اچھی بات یہ ہے کہ بھارتی عوام نے بارہا ایسی صورتحال کا سامنا کیا ہے اور وہ دہشت گردانہ کاررائیوں کے سامنے کبھی جھکے نہیں۔‘

انہوں نے کہا کہ بھارت دہشت گردی کا مقابلہ کرنے کے لیے پر عزم ہے اور ایسا کرنے والوں اور سازش کرنے والوں کو کیفرِ کردار تک پہنچانے کی ہر ممکن کوشش میں لگا ہے۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔