’کوہِ نور بھارت کو واپس نہیں کریں گے‘

آخری وقت اشاعت:  جمعرات 21 فروری 2013 ,‭ 10:16 GMT 15:16 PST
کوہ نور ہیرہ

بھارت میں لوگ ایک لمبے وقت سے برطانیہ سے یہ ہیرہ واپس کرنے کا مطالبہ کررہے ہیں

برطانیہ کے وزیر اعظم ڈیوڈ کیمرون نے اپنے دورۂ بھارت کے دوران کہا ہے کہ انیسوی صدی میں بھارت سے برطانیہ لے جایا جانے والا کوہِ نور ہیرا واپس نہیں کیا جائے گا۔

دنیا کے سب سے بڑے ہیروں میں شمار ہونے والا ایک سو پانچ کیرٹ کے کوہِ نور ہیرے کو انیسوی صدی میں اس وقت برطانیہ لے جایا گیا تھا جب بھارت پر برطانیہ کا قبضہ تھا اور بھارت برطانیہ کی نو آبادی تھی۔

یہ کوہِ نور ہیرہ فی الحال لندن ٹاور میں رکھا ہوا ہے۔

واضح رہے کہ مہاتما گاندھی کے پوتے سمیت بھارت کی کئی اہم شخصیات برطانیہ سے کئی بار یہ مطالبہ کرچکی ہیں کہ وہ کوہِ نور ہیرہ بھارت کو واپس کریں۔

لیکن ڈیوڈ کیمرون نے اپنے حالیہ بھارت کے دوران نے اس مطالبے کو خارج کرتے ہوئے کہا ’مجھے نہیں لگتا کہ یہ صحیح طریقہ ہے۔ یونان کے الینگن سنگ مرمر کا بھی یہی معاملہ ہے۔ مجھے چیزوں کو لوٹانے میں کوئی یقین نہیں ہے۔ مجھے نہیں لگتا ہے کہ یہ سمجھداری والی بات ہے‘۔

واضح رہے کہ یونان کے پتھروں سے بنی مورتیوں کو بھی برطانیہ لے جایا گیا تھا اور یونان ایک لمبے عرصے سے ان کی واپسی کا مطالبہ کررہا ہے لیکن برطانیہ نے انہیں بھی واپس کرنے سے انکار کردیا ہے۔

"مجھے نہیں لگتا کہ یہ صحیح طریقہ ہے۔ یونان کے الینگن سنگ مرمر کا بھی یہی معاملہ ہے۔ مجھے چیزوں کو لوٹانے میں کوئی یقین نہیں ہے۔ مجھے نہیں لگتا ہے کہ یہ سمجھداری والی بات ہے"

ڈیوڈ کیمرون

اس بارے میں ڈیوڈ کیمرون نے مزید کہا ’اس کا صحیح جواب یہ ہے کہ برطانیہ کے عجائب گھر دنیا بھر کے دوسرے عجائب گھروں کے ساتھ بات کر کے اس بات کو یقینی بنائیں گے کہ برطانیہ نے جن نایاب چیزوں کو جتنے بہترین طریقے سے سنبھال کر رکھا ہے ان کو پوری دنیا کے لوگوں کے ساتھ شيئر کیا جائے‘۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ وہ ماضی کے بارے میں سوچنے سے زیادہ بھارت کے ساتھ موجودہ اور مستقبل کے رشتوں پر اپنی توجہ مرکوز کرنا چاہتے ہیں۔

واضح رہے کہ اٹھارہ سو پچاس میں بھارت کے اس وقت کے گورنر جنرل نے برطانیہ کی ملکہ وکٹوریا کو یہ کوہِ نور ہیرا تحفے میں دیا تھا۔

بعد میں اس ہیرے کو ملکہ ایلزبتھ کے تاج میں سجا دیا گیا تھا۔

انیس سو ستانوے میں ملکہ ایلزبتھ دوئم جب بھارت کے دورے پر آئی تھیں تو ان کے دورے کے دوران بھی بھارت میں کوہِ نور واپس کرنے کا مطالبہ کیا تھا۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔