Got a TV Licence?

You need one to watch live TV on any channel or device, and BBC programmes on iPlayer. It’s the law.

Find out more
I don’t have a TV Licence.

خلاصہ

  1. پاکستان کی سپریم کورٹ نے پاناما کیس کا فیصلہ سناتے ہوئے وزیر اعظم پاکستان کو نا اہل قرار دے دیا ہے۔
  2. پانچ رکنی بینچ نے فیصلہ سناتے ہوئے کہا کہ میاں نواز شریف فوری طور پر وزیر اعظم نہیں رہے ہیں۔
  3. عدالت نے نیب کو نواز شریف کے علاوہ وزیرِ خزانہ اسحاق ڈار، مریم نواز، حسن نواز، حسین نواز اور کیپٹن صفدر کو شاملِ تفتیش کرنے اور ان کے خلاف ریفرنس بھیجنے کا حکم دیا ہے۔
  4. عدالت نے اپنے فیصلے میں حکم دیا ہے کہ احتساب عدالتیں ان ریفرنس کا فیصلہ چھ ماہ کے اندر کریں۔
  5. سپریم کورٹ کے چیف جسٹس نے کہا کہ ایک جج کو تعینات کیا جائے گا جو قومی احتساب بیورو کی ان ریفرنس کی کارروائی کی نگرانی کریں گے۔

لائیو رپورٹنگ

time_stated_uk

بریکنگسپریم کورٹ سے نااہلی کے بعد نواز شریف عہدے سے سبکدوش

پاکستان کی سپریم کورٹ نے پاناما کیس کا فیصلہ سناتے ہوئے وزیرِ اعظم نواز شریف کو نا اہل قرار دیا ہے۔ نااہلی کے بعد نواز شریف نے وزارتِ عظمیٰ چھوڑ دی ہے۔

اس سلسلے میں بی بی سی اردو کی لائیو اپ ڈیٹس اب اختتام پذیر ہوئیں۔ اس سلسلے میں تفصیلی خبر کے لیے نیچے دیے گئے لنک پر کلک کریں۔

وزیراعظم نااہل، شریف خاندان کے خلاف مقدمے دائر کرنے کا حکم

’ ایک امکان کے مفروضے پر وزیرِ اعظم کو نا اہل کیا گیا‘

احسن اقبال کا نیوز کانفرنس سے خطاب میں کہنا تھا کہ کھودا پہاڑ نکلا چوہا۔ ’سپریم کورٹ کے فیصلے کے بعد اپنی قیادت پر اعتماد دس گنا بڑھ گیا ہے۔

’30 سال میں ہم پاکستان کو آگے نہیں جا نے دیا۔ افغانستان میں جہاں سکیورٹی کے مسائل ہیں وہاں کے وزیرِ اعظم اپنا دورِ حکومت پورے کر جاتے ہیں لیکن پاکستان کے اس عہدے میں جانے کیا خرابی ہے کہ یہاں ایک بھی وزیرِ اعظم اپنی مدت پوری نہیں کرتا۔‘

احسن اقبال کا کہنا تھا ’اگر نااہلی اس بنیاد پر ہوتی کہ عدالت قطیعت کے ساتھ کہتی کہ ہمارے پاس ثبوت آ گئے ہیں کہ وہ فلیٹس نواز شریف کہ ہیں یا ان کے پاس کروڑوں کے اثاثے ہیں تو ہم شرمندہ بھی ہوتے۔ لیکن ایک امکان کے مفروضے پر وزیرِ اعظم کو نااہل کیا گیا۔‘

احسن اقبال
Getty Images

صادق اور امین کی کہانی اب چلے گی: سعد رفیق

سعد رفیق
Gett

سعد رفیق کا کہنا تھا کہ عمران خان محض شو بوائے ہیں۔ ’ہمارے ساتھ یہ پہلی مرتبہ نہیں ہوا۔ خان صاحب بغلیں نہ بجائی چند دنوں میں آپ بغلیں جھانکیں گے۔ ‘

’صادق اور امین کی کہانی اب چلے گی۔ یہ صرف سیاستدانوں تک نہیں رہے گی بلکہ وہاں تک جانی چاہیئے جہاں سے فیصلے ہوتے ہیں۔ ‘

سعد رفیق کا مزید کہنا تھا ’ہم عوام کی عدالت میں جائیں گے ہمیں عوام سے رابطہ کرنے سے کوئی نہیں روک سکتا۔ ’ ’ہم اپنے کارکنوں کو کہتے ہیں کہ تحمل سے کام لیں۔ اداروں کا تقدس قائم رہے۔‘

’یہ معاملہ متنازع ہے جسے بنیاد بنا کر نااہل کیا گیا‘

پاکستان مسلم لیگ نون کے رہنماؤں سعد رفیق، حسن اقبال، شاہد خاقان عباسی اور دیگر رہنماؤں کے ہمراہ نیوز کانفرنس میں بیرسٹر ظفر اللہ کا کہنا تھا کہ وزیرِ اعظم کو عدالت نے کیس میں عائد کردہ الزامات کے تحت نا اہل ہی نہیں کیا۔

زاہد حامد کا کہنا تھا ’کیس میں عائد کردہ الزامات کے تحت کوئی بات نہیں ہوئی بلکہ معاملات نیب کو منتقل کر دیے گئے۔ جبکہ سنجیدہ معاملہ یہ ہے کہ وزیرِ اعظم کو اس معاملے میں نااہل کیا گیا اس کے تحت وزیرِ اعظم کو ایک کمپنی کا ملازم بتا کر ان کی تنخواہ کا معاملہ اٹھایا جس کے وہ رسمی ملازم تھے اور ایسی رقم کو انھوں نے لیا ہی نہیں، کہا گیا کہ وہ لے تو سکتے ہیں اور یہ آپ کا اثاثہ ہے۔ اس معاملہ میں آپ نے جھوٹ بولا اس لیے آپ نا اہل ہیں۔ان کا کہنا تھا کہ ’ یہ معاملہ متنازع ہے جسے بنیاد بن کر نا اہل کیا گیا۔‘

مسلم لیگ نون
BBC

اسٹاک ایکسچینز میں پھر سے مثبت رجحان

سپریم کورٹ کے فیصلے کے بعد پاکستان سٹاک ایکسچینز 100 انڈیکس میں دن کے اختتام پر مثبت رجحان دیکھا گیا اورصبح کے وقت 1200 منفی پوائنٹس سے انڈیکس 112 مثبت پوائنٹس پر بند ہوا۔

دن کے اختتام پر انڈیکس 46000 کی نفسیاتی حد بھی عبور کرگیا۔

’انوکھی مثال, کیس تین ججوں نے سنا فیصلہ پانچ نے دیا‘

مسلم لیگ نون کے رہنماؤں نے پریس کانفرنس کے دوران بیرسٹر ظفراللہ نے کہا کہ ہماری رائے میں ایک سیاسی الزام کے تحت ایک سیاسی جماعت نے پہلے دھرنے سے اقتدار میں آنے کی کوشش کی پھر عدالت کو اس معاملے میں لے آئی۔

'ہم نے بتایا کہ جے آئی ٹی کے ایک ممبر نے پہلے ہی ہمارے خلاف ریفرنس دائر کیا ہے، جے آئی کے ممبران نے ہمیں دھمکایا، اس کے بعد جے آئی ٹی کی رپورٹ جاسوس کی معلومات پر مبنی ہے۔ تین رکنی عدالت نے جے آئی کی رپورٹ پر سماعت کی لیکن فیصلہ پانچ ممبران نے دیا۔ یہ بھی انوکھی مثال تھی۔ ’ایک بات تین جج سنتے ہیں اور فیصلہ پانچ نے دیا۔ آسان تھا کہ پانچوں ہی سن لیتے۔‘

بریکنگاتوار کو یومِ تشکر منائیں گے: عمران

عمران خان
AFP

عمران خان کا کہنا تھا اگر حکومت یا سپریم کورٹ عزم کر لے تو چوری کیا گیا پیسہ بھی واپس آ سکتا ہے۔ ہم یہی پیسے ملکی وسائل کی بہتری پر لگا سکتے ہیں۔ آج بہت خوش آئند دن ہے۔ آج شروعات ہے آئندہ اور بھی بڑے بڑے چور پکڑے جائیں گے۔

میں اپنے تمام حامیوں کو دعوت دیتا ہوں کے ہم اتوار کو پریڈ گراؤنڈ میں یوم تشکر منائیں گے۔ وہ تمام لوگ جو 21 سال سے میرے ساتھ ہیں وہ تمام لوگ آئیں۔

’عدالت نے ثابت کیا کے طاقتور کو بھی قانون کے تحت لایا جا سکتا ہے‘

عمران خان کا کہنا تھا جب تک اس ملک میں طاقتور کو قانون کے کٹہرے میں نہیں لایا جائے گا اس ملک کا کوئی مستقبل نہیں ہے۔ آج سپریم کورٹ نے موجودہ وزیرِ اعظم کے خلاف فیصلہ دیا۔ عدالت نے ثابت کیا کے طاقتور کو بھی قانون کے تحت لایا جا سکتا ہے۔

’عدالتی کارروائی سے آگاہ ہونے کے باوجود ان کا دفاع کرنے والے سیاستدانوں سے کہنا چاہتا ہوں کہ کیا آپ کو قوم کے بچوں، اپنے بچوں کے مستقبل کی کوئی پرواہ نہیں۔ قومیں بمباری، جنگوں اور آفتوں سے تباہ نہیں ہوتیں، بلکہ اس کے انصاف کے اداروں کے تباہ ہونے سے تباہ ہوتی ہیں۔‘

’گو نواز گو سے گون نواز گون‘

جمعے کی صبح عدالتی فیصلے کے بعد پاکستانی سوشل میڈیا میں پاناما ورڈکٹ، نواز شریف، گون نواز گون، پاناما پیپرز اور ایسے ہی دیگر موضوعات ٹرینڈ کرتے رہے۔ پڑھنے کے لیے کلک کریں

بریکنگ’طاقتور کو کوئی ہاتھ نہیں لگاتا: عمران خان

عمران خان نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا ’میں سپریم کورٹ اور جے آئی ٹی کے ممبران کا شکریہ ادا کرتا ہوں۔ تاریخ رہی ہے جو حکومت میں ہوتا ہے اس کے خلاف کوئی احتساب نہیں ہوتا لیکن جب وہ حزبِ اختلاف میں آتے تو ان کے خلاف کارروائی ہوتی ہے اور وہ جیلوں میں جاتے ہیں۔ طاقتور کو کوئی ہاتھ نہیں لگاتا۔‘

پی ٹی آئی
AFP

بریکنگ’نواز شریف کے خاندان کے ساتھ کوئی ذاتی لڑائی نہیں‘

عمران خان
AFP

عمران خان کا نیوز کانفرنس میں کہنا تھا 2013 کے الیکشن سے شروع ہونے والی جدوجہد، دھرنے کے دنوں اور سپریم کورٹ میں ہونے والی کوششوں کے بعد آج رنگ لائی۔

’میں اپنے ملک کے لیے اللہ کا شکر گزار ہوں۔ یہ ملک عدل انصاف کے لیے بنا تھا۔ مجھے آج خوشی ہے کہ ہمارے ملک کی علامہ اقبال کے خواب کی طرف کی امید پوری ہوئی ہے۔ میری نواز شریف کے خاندان کے ساتھ کوئی ذاتی لڑائی نہیں۔‘

’انشا اللہ اگلا وزیر اعظم ۔۔۔‘

جمائما گولڈ سمتھ نے ٹویٹ میں کہا ہے: پاکستان میں کسی منتخب وزیر اعظم نے اپنے پانچ سال پورے نہیں کیے۔ انشا اللہ اگلا کرے گا۔

No civilian PM of Pakistan has ever completed a full 5 yr term. Inshallah the next one will. twitter.com/bbcbreaking/st…

’کیوں غم میں ہیں؟‘

مریم نواز نے ایک ٹویٹ کے جواب میں کہا جس میں کہا گیا تھا کہ ’مريم بى بى - اس وقت هم غم میں ہیں‘ : کیوں غم میں ہیں؟ یہ پہلی بار نہیں ہے کہ آپ کے رہنما کو اقتدار نے نکالا گیا ہو اور مقدموں کا سامنا کرنا پڑے۔ اس قسم کے ہر اقدام نے ان کو زیادہ مضبوط کیا ہے۔‘

Kion ghum main hain? Not the first time your leader had to face ouster & trial. Every such act has made him stronge… twitter.com/i/web/status/8…

اسٹاک ایکسچیج میں مندی

سپریم کورٹ میں وزیراعظم کی نااہلی سے منتعلق فیصلے کے تناظر میں پاکستان اسٹاک ایکسچینج میں جمعے کی نماز کے بعد کاروبار کےآغاز میں مزید مندی ریکارلا کی گئی۔ انڈیکس 45000 کی سطح سے ایک بار پھر نیچے آگیا۔ نامہ نگار حسن کاظمی کے مطابق مجموعی طور پر 2 فیصد سے زائد کی کمی ہوئی تاہم خریداروں کی جانب سے مثبت رجحان ملا۔

’روک سکتے ہو تو روک لو!‘

مریم نواز نے ایک اور ٹویٹ میں لکھا: آج کا دن 2018 میں نواز شریف کی واضح برتری کی راہ ہموار کی ہے۔ ان کو روکنا ناممکن ہو گا انشا اللہ۔ روک سکتے ہو تو روک لو!

Today will pave the way for Nawaz Sharif's resounding victory in 2018. He will be unstoppable. Insha'Allah. Rok sakte ho to rok lo !

’ایک اور منتخب وزیر اعظم کو گھر بھیج دیا گیا‘

مریم نواز شریف نے سپریم کورٹ کے فیصلہ کے بعد ٹویٹ کرتے ہوئے کہا ہے کہ ’ایک اور منتخب وزیرِ اعظم کو گھر بھیج دیا گیا لیکن وہ بہت جلد زیادہ قوت اور حمایت کے ساتھ لوٹیں گے۔ پی ایم ایل این مضبوط رہنا۔ ‘

Another elected Prime Minister sent home, but only to see him return with greater force & support & soonest Insha'Allah. Stay strong PMLN.

’یو آر ٹو لیٹ‘

شیخ رشید
AFP

شیخ رشید نے راولپنڈی میں اپنے کارکنوں سے خطاب میں کہا تھا کہ وہ ہم نے دوستیاں اور دشمنیاں سیاسی بنیادوں پر نہیں کیں۔ انھوں نے عمران خان کا شکریہ ادا کیا کیونکہ بقول ان کے جنھوں نے اس کیس کو صحیح رخ دیا۔

شیخ رشید نے زور دیتے ہوئے کہا نواز شریف کا کیس ختم ہوگیا۔ ہماری کسی سے لڑائی نہیں ہے۔ ’مجھے تو لگتا تھا کہ نون لیگ کے کارکن بھی اندر سے خوش ہیں۔‘ انھوں نے چوہدری نثار کو مخاطب کرتے ہوئے کہا ’آپ کو اب استعفیٰ دینے کی ضرورت نہیں اب وہ آپ اپنے پاس رکھیں۔ آپ ٹرین مس کر چکے ہیں۔ آپ لیٹ ہو چکے ہیں۔ ‘

نواز شریف صادق نہیں رہے: سپریم کورٹ

نواز
PM HOUSE

سپریم کورٹ کی پانچ رکنی بینچ نے فیصلے میں کہا کہ متحدہ عرب امارات میں کیپیٹل ایف زیڈ ای جبل علی کمپنی کے بارے میں 2013 میں اپنے کاغذات نامزدگی میں ذکر نہ کرنے کے باعث میاں محمد نواز شریف آرٹیکل 62 ون ایف کے تحت صادق نہیں رہے۔

فیصلے میں کہا گیا ہے کہ صادق نہ رہنے کے باعث وہ ممبر قومی اسمبلی سے نااہل قرار دیے جاتے ہیں۔

سپریم کورٹ نے فیصلے میں الیکشن کمیشن کو حکم دیا کہ وہ نواز شریف کو فوری ڈی نوٹیفائی کرنے نوٹیفیکیشن جاری کرے۔

سپریم کورٹ نے فیصلے میں مزید کہا کہ احتساب عدالتیں میاں نواز شریف، ان کے بیٹے حسن نواز، حسین نواز اور ان کی بیٹی مریم نواز اور مریم کے شوہر کیپٹن صفدر کے خلاف ریفرنس دائر کرے۔اس کے علاوہ ایک ریفرنس وزیر خزانہ اسحاق ڈار کے خلاف بھی ریفرنس دائر کیا جائے۔

فیصلے میں کہا گیا ہے کہ قومی احتساب بیورو ان ریفرنس کا فیصلہ چھ ماہ کے اندر کریں۔

اس کے علاوہ سپریم کورٹ کے چیف جسٹس سے درخواست کی گئی ہے کہ ایک جج کو تعینات کیا جائے گا جو قومی احتساب بیورو کی ان ریفرنس کی کارروائی کی نگرانی کریں گے۔

نااہلی کا فیصلہ، نواز شریف وزارت عظمیٰ سے سبکدوش

پاکستان کی سپریم کورٹ نے پاناما کیس کا فیصلہ سناتے ہوئے وزیر اعظم پاکستان نواز شریف کو نا اہل قرار دیا جس کے بعد نواز شریف اپنی تمام ذمہ داریوں سے سبکدوش ہو گئے ہیں۔

پاکستان کے آئین کے مطابق وزیراعظم نواز شریف کی سبکدوشی کے بعد نئے وزیراعظم کی حلف برداری تک قومی اسمبلی کے سپیکر ایاز صادق نے وزارتِ عظمیٰ کی ذمہ داریاں سنبھال لی ہیں۔

کس کے خلاف کونسا ریفرنس؟

سپریم کورٹ نے حکم دیا ہے کہ مندرجہ ذیل ریفرنس دائر کیے جائیں:

ایون فیلڈ پراپرٹی کا ریفرنس: میاں نواز شریف، مریم نواز شریف، حسین نواز، حسن نواز اور کیپٹن محمد صفدر

عزیزیا سٹیل کمپنی اور ہل میٹل اسٹیبلشمنٹ ریفرنس: میاں نواز شریف، حسین نواز اور حسن نواز

ایک اور ریفرنس میاں نواز شریف، حسین نواز اور حسن نواز کے خلاف

آمدن سے زیادہ اثاثے رکھنے کا ریفرنس: وزیر خزانہ اسحاق ڈار

فیصلے میں مزید کہا گیا ہے کہ اس کارروائی میں شیخ سعید، موسیٰ گیلانی، کاشف مسعود قاضی، جاوید کیانی اور سعید احمد کو شامل کیا جائے۔

فیصلے میں قومی احتساب بیورو کو حکم دیا گیا ہے کہ اگر کوئی معاہدہ، دستاویز جعلی نکلتے ہیں تو احتساب عدالت قانون کے مطابق کارروائی کرے۔

جمائما کی ٹویٹ

پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان کی سابقہ بیوی جمائما نے ٹویٹ کی ہے: نواز گیا!

فیصلے کے بعد احتجاج

پاکستان مسلم لیگ کے کارکنان
EPA
پاکستان مسلم لیگ کے کارکنان
EPA
پاکستان مسلم لیگ کے کارکنان
AFP
پاکستان مسلم لیگ کے کارکنان
EPA

پاکستان مسلم لیگ کارکن
BBC
پاکستان مسلم لیگ نواز کے کارکن لاہور میں بارش کے باوجود اپنے رہنما کے حق میں نعرے بازی کر رہے ہیں

فیصلے کی تصدیق اور گو نواز گو کے نعرے

کمرہ عدالت کے باہر قریب 60-70 افراد موجود تھے جو پل پل کی خبر کا انتظار کر رہے تھے اور وزیر اعظم کی نااہلی کا حکم آتے ہی عدالت کے باہر ایک بھونچال آ گیا۔ صحافی ایک دوسرے سے فیصلے کی تصدیق کرتے نظر آئے اور دیگر افراد نے گو نواز گو کے نعرے لگا کر خوشی کا اظہار کیا۔

فیصلہ لوگوں تک کیسے پہنچا؟

جسٹس آصف سعید کھوسہ نے فیصلے سے قبل تاخیر پر معذرت کی۔

فیصلہ پڑھنے کے آغاز کے ساتھ ہی عدالت کے اندر موجود رنرز، یعنی وہ افراد جو عدالت سے باہر اپنے ساتھی صحافیوں کو خبر پہنچاتے ہیں، یکے بعد دیگرے آنا شروع ہوئے اور جسٹس آصف سعید کھوسہ کے فیصلے کی جھلکیاں فراہم کرنے میں مصروف ہو گئے۔

سپریم کورٹ
BBC

فیصلے کا دن، سپریم کورٹ میں کیا دیکھا

ہمارے نامہ نگار عابد حسین نے بتایا فیصلے سے قبل عدالت عظمیٰ کے کورٹ نمبر ایک کے باہر صحافیوں، وکلا اور سکیورٹی اہلکاروں کا ایک جم غفیر موجود تھا۔

کورٹ نمبر ایک سپریم کورٹ کا سب سے بڑا کورٹ ہے اور اس کمرے میں تقریباً 120 افراد کے بیٹھنے کی جگہ ہے لیکن آج یہ کمرہ کھچا کھچ بھرا ہوا تھا اور 400 سے زائد افراد وہاں موجود تھے اور حقیقتاً تل دھرنے کی جگہ نہ تھی۔

سپریم کورٹ
BBC

فیصلے کے بعد خوشیاں

اسلام آ باد
AFP
islamabad
AFP
islamabad
Reuters
islamabad
Reuters

بریکنگنئے وزیراعظم کی حلف برداری تک ذمہ داریاں سپیکر کے حوالے

پاکستان کے آئین کے مطابق وزیراعظم نواز شیرف کی سبکدوشی کے بعد نئے وزیراعظم کی حلف برداری تک قومی اسمبلی کے سپیکر ایاز صادق نے وزارتِ عظمیٰ کی ذمہ داریاں سنبھال لی ہیں۔

عوامی نیشنل پارٹی کا مشاورتی اجلاس سنیچر کو

عوامی نیشنل پارٹی کے مرکزی سیکرٹری اطلاعات زاہد خان نے کہا ہے کہ سپریم کورٹ کے فیصلے اور موجودہ سیاسی صورت حال پر پارٹی کے سربراہ اسفند یار ولی خان نے مرکزی مشاورتی کمیٹی کا اجلاس کل سنیچر کو دن 11 بجے بلور ہاؤس پشاور میں طلب کر لیا ہے۔

ان کے مطابق اسفند یار ولی خان تین بجے پریس کانفرنس سے خطاب کریں گے

PM Y R Gilani was disqualified by a 3 member bench of the Supreme Court. Today 5 sit in judgement on much more on another PM #PanamaVerdict

بریکنگنواز شریف کی جگہ کون لے سکتا ہے؟

وفاقی کابینہ بھی تحلیل ہوگئی

وزیراعظم نواز شریف کی وزارتِ عظمیٰ سے سبکدوشی کے بعد وفاقی کابینہ بھی تحلیل ہوگئی ہے

بریکنگ’ہمارے ساتھ ناانصافی ہوئی ہے: مسلم لیگ ن

pmln
BBC

نواز شریف اپنی ذمہ داریوں سے سبکدوش

پاکستان مسلم لیگ نون کے ترجمان کے مطابق پاناما کیس سے متعلق فیصلہ آتے ہی نواز شریف اپنی تمام ذمہ داریوں سے سبکدوش ہو گئے ہیں۔

نواز شریف
Getty Images

کراچی میں پیپلز پارٹی کا اجلاس جاری

پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کی قیادت میں پارٹی کی سینئر قیادت کا اجلاس بلاول ہاؤس کراچی میں جاری ہے۔

بلاول بھٹو زرداری
BBC

فیصلے پر نظر ثانی کی اپیل پر غور

پاکستان مسلم لیگ نون کے رکن مصدق ملک نے بی بی سی سے بات کرتے ہوئے کہا ہے کہ ان کی جماعت اس فیصلے پر نظر ثانی کی اپیل کرنے پر غور کریں گے تاہم فی الحال کوئی حتمی فیصلہ نہیں کیا گیا ہے۔

وزیر خزانہ اسحاق ڈار کے خلاف بھی ریفرنس

ishaq
AFP

ایک ریفرنس حسن نواز کے خلاف بھی

hassan
AFP

ایک ریفرنس حسین نواز کے خلاف بھی

حسین
AFP

بریکنگفیصلے سے حیرانی نہیں ہوئی افسوس ضرور ہوا: مریم اورنگزیب

maryam
EPA

وزیرِ مملکت برائے اطلاعات مریم اورنگزیب نے کہا ہے کہ ’آج بظاہر ہم ایک فیصلہ ضرور ہارے ہیں۔اگر پاکستان کے سیاسی جمہوری پس منظر میں دیکھا جائے تو آج کے فیصلے سے حیرانی نہیں ہوئی افسوس ضرور ہوا ہے۔

وزیراعظم نواز شریف عوام سے ہمیشہ سرخرو ہوئے ہیں۔ مسلم لیگ ن ایک حقیقت اور ملک کی سب سے بڑی سیاسی جماعت ہے۔

تاریخ اس بات کی گواہ ہے کہ سیاست میں اور دوسرے طریقوں سے جب جب نواز شریف کو پاکستان کے سیاسی منظر سے ہٹایا گیا، تاریخ اور پاکستانی عوام پہلے سے زیادہ تعداد میں انھیں واپس پارلیمان میں لے کر آئی۔

فیصلے کی تفصیلات دیکھیں گے۔ آئینی و قانونی ماہرین سے مشورہ کر کے لائحہ عمل طے کریں گے۔

فیصلے میں ایک پیسے کی ’سرکاری کرپشن‘ ثابت نہیں کی جا سکی۔‘