غزہ پر اسرائیلی حملے اور احتجاجی مظاہرے

آخری وقت اشاعت:  اتوار 18 نومبر 2012 ,‭ 19:48 GMT 00:48 PST
  • غزہ پر چوتھے روز بھی فضائی حملے جاری رہے جن میں حماس کے وزیر اعظم کے دفتر اور کابینہ کی عمارت کو نشانہ بنایا گیا۔اسرائیلی فوج کے مطابق اب بھی سینکڑوں ہدف موجود ہیں جن کے لیے وہ غزہ کے اندر حملے کرنا چاہتی ہے
  • اسرائیل نے ایک بیان میں کہا ہے کہ جمعہ اور ہفتے کی درمیانی شب سے اسرائیلی فضائیہ نے ایک سو اسّی سے زیادہ فضائی حملے کیے۔اسرائیلی فضائی حملوں کی وجہ سے چار روز میں اڑتیس فلسطینی ہلاک ہو چکے ہیں
  • غزہ میں بی بی سی کے نمائندے جون ڈونیسن کہتے ہیں کہ فضائی بمباری کی آوازیں مسلسل جاری ہیں۔دیما مشعل کا ٹوئٹر پر پیغام: میرے گھر کے قریب بہت بڑا دھماکہ۔ میرے خدا، ایسا لگتا ہے کہ جیسے زلزلہ آ گیا ہو۔ رعنا کا ٹوئٹر پر پیغام: دھماکوں کا سلسلہ۔ تمام غزہ پر اسرائیلی ڈرون طیاروں کی پروازوں میں اضافہ
  • فلسطینی شہری کارمیل کے مطابق اسرائیل نے فلسطینیوں سے کہا ہے کہ وہ اپنے گھروں سے نکل جائیں۔ میری دادی کو فون پر ایس ایم ایس آیا کہ اگر آپ حماس کے کسی رکن کو جانتی ہیں تو اس سے دور رہیں
  • غزہ کے علاقے سے اسرائیل پر راکٹ داغے جانے کا سلسلہ جاری ہے۔تجزیہ کاروں کے مطابق حماس کے عسکریت پسندوں نے ایسے طاقتور میزائلوں کا استعمال پہلی بار کیا ہے
  • اسرائیلی فوج کے ترجمان کے مطابق بدھ کے بعد سے اب تک اسرائیلی علاقے پر پانچ سو پچاس راکٹ داغے گئے جن میں سے ایک سو چوراسی کو اسرائیل کے میزائل شکن دفاعی نظام نے راستے ہی میں تباہ کر دیا
  • حماس کی جانب سے راکٹ داغے جانے پر اسرائیل میں عام شہریوں کو سائرن کے ذریعے خبردار کیا جاتا ہے
  • غزہ پر اسرائیلی حملوں کے بعد مختلف ممالک میں احتجاجی مظاہرے بھی ہوئے ہیں۔ لبنان میں فلسطینی اور لبنانی شہری احتجاج کر رہے ہیں
  • لندن میں بھی اسرائیل کے خلاف ایک احتجاجی مظاہرہ کیا گیا
  • غرب اردن میں بھی فلسطینی اسرائیلی حملوں کے خلاف احتجاجی مظاہرہ کر رہے ہیں
  • ترکی کے وزیراعظم مصر پہنچے ہیں جہاں انہوں نے غزہ کی صورتحال پر مصر کے صدر محمد مرسی سے تبادلہ خیال کیا۔تیونس کے وزیر خارجہ نے عرب رہنماؤں پر زور دیا ہے کہ ’اسرائیلی جارحیت‘ کو ختم کیا جائے
  • عینی شاہدین کے مطابق اسرائیلی حملے میں حماس کے ہیڈ کوارٹر کو بہت نقصان پہنچا ہے
  • جمعہ اور ہفتے کی درمیانی شب کو اسرائیل کی جانب سے کوئی کارروائی نہیں کی گئی لیکن ہفتے کی صبح غزہ ایک بار پھر دھماکوں کی آوازوں سے گونج اٹھا
  • امریکی صدر براک اوباما نے اسرائیلی وزیر اعظم بنیامن نیتن یاہو کو فون کیا اور ایک بار پھر اسرائیل کے ’دفاع کا حق رکھنے‘ کی حمایت کی
  • وائٹ ہاؤس کے ترجمان کے مطابق دونوں رہنماؤں نے کشیدگی کم کرنے کے حوالے سے بھی بات چیت کی
  • اسرائیل اور حماس کے درمیان حالیہ کشیدگی اس وقت شروع ہوئی جب اسرائیل نے فضائی حملہ کر کے حماس کے عسکری شعبے کے سربراہ احمد جباری اور ان کے نائب کو ہلاک کر دیا تھا

ملٹی میڈیا

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔