فیئر ٹرائل بل: ’عوام کس کو فوقیت دیتی ہے؟‘

آخری وقت اشاعت:  جمعـء 21 دسمبر 2012 ,‭ 02:33 GMT 07:33 PST

میڈیا پلئیر

پاکستان کی قومی اسمبلی نے فیئر ٹرائل بل منظور کر لیا ہے جس کے تحت سکیورٹی ایجنسیوں کو مشتبہ افراد کے خلاف جدید ٹیکنالوجی کے ذریعے شواہد اکٹھے کرنے کی اجازت ہوگی۔

سنئیےmp3

اس مواد کو دیکھنے/سننے کے لیے جاوا سکرپٹ آن اور تازہ ترین فلیش پلیئر نصب ہونا چاہئیے

متبادل میڈیا پلیئر چلائیں

پاکستان کی قومی اسمبلی نے فیئر ٹرائل بل منظور کر لیا ہے جس کے تحت سکیورٹی ایجنسیوں کو مشتبہ افراد کے خلاف جدید ٹیکنالوجی کے ذریعے شواہد اکٹھے کرنے کی اجازت ہوگی۔

اس بل کی منظوری کے ساتھ یہ بحث بھی اتنی ہی ضروری ہو گئی ہے کہ کیا ملک کی پارلیمان اور عدالتی نظام اتنا مضبوط ہے کہ ان نئے اختیارات کے غلط استعمال کو روک پائے یا انٹیلیجنس اداروں کے ذریعے اس قانون کے اطلاق میں شفافیت کو یقینی بنا سکے۔ یہ سوال ہمارے ساتھی نے بین الاقوامی ادارے سٹریٹفور سے منسلک کامران بخاری سے پوچھا۔

ملٹی میڈیا

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔