پیر انتیس اپریل کا سیربین

پیر انتیس اپریل کو نشر ہونے والے بی بی سی اردو سروس کے ٹی وی پروگرام سیربین کے چاروں حصے آپ اس صفحے پر دیکھ سکتے ہیں۔ یہ پروگرام ایکسپریس نیوز پر نشر کیا گیا تھا۔

سیربین ہفتے میں تین دن یعنی پیر، بدھ اور جمعے کو پاکستان کے مقامی وقت کے مطابق رات گیارہ بجے ایکسپریس نیوز پر نشر ہوتا ہے۔

پی پی پی کا ووٹر سے رشتہ روحانی یا سیاسی؟

اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

پاکستان پیپلز پارٹی کے ناقدین کہتے ہیں کہ گزشتہ پانچ سالہ دورِ اقتدار میں صوبۂ سندھ ميں بھي پارٹی کي کارکردگي اچھي نہيں رہي۔ محرومیوں کا شکار کئي کارکن يا تو مايوس ہيں يا اپني سياسي ترجيحات تبديل کر رہے ہيں۔ یہ بھی کہا جاتا ہے کہ اِس صورتحال سے پیپلز پارٹی کے مخالفین نے فائدہ اٹھایا ہے جس کی وجہ سے آئندہ انتخابات میں شاید پيپلز پارٹي کو سندھ ميں مشکلات کا سامنا ہو۔ ليکن بعض لوگوں کا خيال ہے کہ بھٹو خاندان سے سندھ کے لوگوں کا رشتہ سياسي سے زيادہ روحاني ہے۔

اِسي کا جائزہ ليا ہے نامہ نگار صبا اعتزاز نے اپنی رپورٹ میں۔

اِسي موضوع پر مزيد بات کرنے کے ليے سٹوڈيو ميں موجود تھے بي بي سي اردو سروس کے ثقلين امام۔

اس کے بعد دیکھیے سوشل میڈیا پر آنے والی آپ کی آراء۔

انتخابات اور تحفظ کے متلاشی کوئٹہ کے ہزارہ

اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

پاکستان ميں انتخابات قريب آتے جا رہے ہيں اور ساتھ ہي کچھ مخصوص سياسي جماعتوں پر شدت پسندوں کے حملوں ميں بھي اضافہ ہوتا جا رہا ہے۔ انتخابي دفاتر پر بم دھماکے کيے جا رہے ہيں جن کے نتيجے ميں اب تک درجنوں سياسي کارکن ہلاک ہو چکے ہيں۔ ليکن ايک برادری ايسي ہے جس کے ليے يہ صورتحال نئي نہيں۔ کوئٹہ کي شيعہ ہزارہ برادي گزشتہ ایک دہائی سے شدت پسند تنظیموں کے نشانے پر ہے۔ آٹھ سو لوگ ہلاک اور کئی سو زخمی اور معذور ہوچکے ہیں۔ پچھلی دو حکومتیں ان حملوں کو روکنے میں نا کام رہيں۔ کيا آنے والي حکومت اِس برادري کو تحفظ فراہم کر سکے گي۔

اس حصے میں دیکھیے کوئٹہ سے ریاض سہیل کی خصوصی رپورٹ۔

اسي صورتحال کے بارے ميں بات کرنے کے ليے بي بي سي کے اسلام آباد سٹوڈيو سے پروگرام میں براہِ راست شریک تھے جمعيت علمائے اسلام کے ترجمان جان اچکزئي۔

سب سے آخر میں دیکھیے آپ کی جانب سے سوشل میڈیا پر آنے والی آپ کی آراء۔

عالمی خبریں اور انتخابات پر تجزیوں کا نیا سلسلہ

اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

اس حصے میں پہلے شامل کی گئیں عالمی خبریں جن میں سب سے پہلے شامل تھی بنگلہ دیش سے خبر جہاں ایک آٹھ منزلہ عمارت منہدم ہونے کے نتیجے میں اب کسی شخص کے زندہ بچ جانے کی امید نہیں رہی ہے۔ اس عمارت کے مالک محمد سہیل رانا کو بھارتی سرحد کے قریب سے گرفتار کر کے ڈھاکہ پہنچا دیا گیا ہے۔ بنگلہ دیش کی وزیراعظم شیخ حسینہ واجد نے بھی پہلی مرتبہ آج جائے حادثہ کا دورہ کیا۔

اس کے بعد مزید عالمی خبروں میں شامل تھیں عراق میں فرقہ وارانہ تشدد کے واقعات کی خبر اور یہ کہ سائنسدانوں نے ملیریا کا باعث بننے والے جرثومے کی ایسی نئی قسم دریافت کی ہے جس پر ملیریا کی عام دواؤں کا اثر نہیں ہوتا۔

اسی طرح برما سے خبر شامل تھی جہاں ایک خصوصی کمیشن نے حکومت کو تجویز دی ہے کہ ملک کے روہنگیا مسلمانوں کی سکیورٹی کو دوگنا کر دیا جائے۔

عالمی خبروں میں شام کے وزیراعظم وائل الحلقی پر دارالحکومت دمشق میں ایک کار بم حملے کے حوالے سے رپورٹ بھی دیکھیے اسی حصے میں۔

سيربين اليکشن سپيشل

يہ ہمارے خصوصي پروگراموں کا سلسلہ ہے جو ہم اس ہفتے سے ہر منگل اور جمعرات کو آپ کے ليے پيش کريں گے۔ يہ پروگرام آپ حسب معمول رات گيارہ بجے ايکسپريس نيوز پر ديکھ سکيں گے۔

اس کے علاوہ ہم نے سيربين ميں بھي انتخابي تجزيوں کا بندوبست کيا ہے۔ اس کي پہلي کڑي بی بی سی اردو کے ایڈیٹر عامر احمد خان نے تيار کي ہے، جس ميں انيس سو ستّر سے ہونے والے انتخابات ميں مختلف سياسي جماعتوں کے ووٹ کے حصے کا جائزہ ليا گيا ہے۔

بزنس

اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

اس حصے میں شامل ہوتا ہے ہفتہ وار سلسہ ’بزنس‘۔

پچھلے ايک ہفتے ميں کراچي ميں پانچ انتخابي دفاتر پر بم حملے ہوئے ہيں، جس کے نتيجے ميں چار دن تک شہر ميں سوگ منايا گيا۔ اس سب سے لوگوں کي روزمرہ کي زندگي، ان کا روزگار اور شہر کي معيشت کس طرح متاثر ہوتي ہے۔ يہي جاننے کي کوشش کي ہے ہمارے بِزنس کے نامہ نگار خرم حسين نے۔

اسی بارے میں