جمعہ 31 مئی کا سیربین

جعمہ 31 مئی کو نشر ہونے والے بی بی سی اردو سروس کے ٹی وی پروگرام سیربین کے چاروں حصے آپ اس صفحے پر دیکھ سکتے ہیں۔ یہ پروگرام ایکسپریس نیوز پر نشر کیا گیا تھا۔

سیربین ہفتے میں تین دن یعنی پیر، بدھ اور جمعے کو پاکستان کے مقامی وقت کے مطابق رات گیارہ بجے ایکسپریس نیوز پر نشر ہوتا ہے۔ اس کے علاوہ سیربین بی بی سی اردو ڈاٹ کام پر لائیو نشر کیا جاتا ہے۔

نئی پارلیمان، نئے چیلنج

اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

پاکستان میں نئی پارلیمنٹ بارہ گھنٹے سے بھي کم وقت ميں حلف اٹھانے والی ہے۔ گذشتہ پارلیمان ميں کئي اہم قوانين حکمراں جماعت اور حزب اختلاف نے اتفاق رائے سے منظور کیے۔ ليکن يہي اسمبلي ملک کو درپیش کئي اہم مسائل کو حل کرنے کے ليے جامع اور قابل عمل تجاویز دینے میں ناکام رہی۔ عام انتحابات کے بعد منتخب ہونے والی چودھویں قومی اسمبلی کے اراکین کيا گلي محلوں کے مسائل سے باہر نکل کر قومي مسائل پر توجہ دے پائيں گے؟

اسی سوال کا جواب نامہ نگار ارم عباسی نے تلاش کرنے کی کوشش کی ہے۔

سب سے آخر میں دیکھیے سوشل میڈیا پر آنے والی آپ کی آرا۔

حصہ دوم

اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

نائيجريا کے جنوبي علاقوں پر مشتمل نائجر ڈیلٹا، جہاں نسلوں سے قُدرتی توازن کو برقرار رکھتے ہوئے ماہی گیری اور کاشت کاری کی جاتی تھي۔ مگر تیل کی انڈسٹری کے پھيلاؤ سے مقامي معيشت کو مدد ملنے کے بجائے مقامی طرزِ زندگی کو شدید خطرات لاحق ہوگئے ہيں۔ مزید تفصیلات کے ساتھ خالد کرامت۔

امریکہ نے روس سے کہا ہے کہ وہ شام کی فوج کو جدید میزائل سسٹم مہیا نہ کرے۔ امریکی وزیرِ خارجہ جان کیری کا کہنا ہے کہ روسي اسلحے کي سپلائي سے شام میں جاری جنگ پر منفي اثرات مرتب ہوں گے، جنگ طويل ہو جائے گي اور اسرائیل کی سلامتی کو بھی خطرہ ہوگا۔

فٹبال کی عالمی تنظیم فیفا کی گورننگ باڈی نے کھیلوں میں نسل پرستی کے سِدباب کے لیے مُجوزہ قوانین کو منظور کر لیا ہے۔ اِن نئے قوانین کے اِطلاق کے بعد سے ٹیموں کو نسل پرستی کے واقعات میں ملوث ہونے پر مقابلوں سے خارج کیا جا سکتا ہے اور جُرمانہ بھي عائد کيا جا سکتا ہے۔

امریکہ نے ایران کو موبائل فون سمیت مواصلات کے دیگر آلات کی فروخت پر عائد پابندیوں میں نرمی کا اعلان کیا ہے۔

امریکی وزارتِ خارجہ کا خیال ہے کہ آئندہ ماہ ہونے والے صدارتی انتخاب کے دوران ایرانی عوام کو حکومت کی روک ٹوک کے بغیر آپس میں روابِط اور معلومات تک رسائی ہونی چاہیے۔

بھارت میں معاشي ترقی کی شرح پانچ فیصد ہوگئی ہے۔گذشتہ دس سالوں میں مالی سال دو ہزار بارہ تیرہ کے دوران معاشی ترقی کی شرح سب سے کم رہی ہے۔صرف تین سال قبل ہی بھارت ميں معاشی ترقی کی شرح گیارہ فیصد تھی۔لیکن حالیہ مہینوں میں اس میں کافی تیزی سے کمی آئی ہے۔

سائنسدانوں کا یہ خواب صدیوں پرُانا ہے کہ انسان مِریخ پر چہل قدمی کر سکے۔ پچھلے سال جب ناسا کی مریخ گاڑی کیوروسٹی کو مِریخ پر بھیجا گیا تو یہ انتہائی اہم پیش رفت تھی۔ لیکن اب اس کے ذریعے حاصل ہونے والے اعداد و شمار سے پہلے سے موجود اس خدشے کو تقویت ملی ہے کہ سُرخ سيارے کي جانب سفر کرنے والے خلا بازوں کو بہت خطرناک تابکاری کا سامنا کرنا پڑے گا۔ تفصیل جاوید سومرو سے۔

بھارت اور برصغير ميں جس ايک چيز نے لوگوں کو کسي نہ کسي طرح سے ايک دوسرے سے جوڑ کر رکھا ہے، اور وہ ہے بالي وڈ ۔۔۔ موسيقي، ڈراما اور جذبات سے لبريز بالي وڈ فلموں کي انڈسٹري اس ماہ سو برس کي ہوگئي ہے۔ بي بي سي کے ايک حاليہ سروے ميں لوگوں نے اپنا سب سے پسنديدہ بالي وڈ نغمہ ’بہارو پھول برساؤ‘ کو قرار دیا۔ آپ بھي سوچيے کہ آپ کا پسنديدہ گانا کون سا ہے۔ اور اس دوران اس رپورٹ کا لطف اٹھائيے جس ميں آپ کو بالي وڈ کے سوسال کا سفر کرا رہے ہيں دلي سے نامہ نگار سہيل حليم۔۔۔

حصہ سوم

اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

پاکستان میں حالیہ انتخابات میں سياسي جماعتوں کي مہم گلی کوچوں کے علاوہ ایک اور جگہ جہاں خوب جم کر چلی، وہ تھی سماجی رابطوں کی ویب سائٹس فیس بک اور ٹوئٹر۔

آپ نے بھی انتخابي مہم کے دوران کسی نہ کسی سیاسی پارٹي کے سوشل میڈیا پیج کو ضرور دیکھا ہوگا۔۔۔ کسی پارٹي نے نوجوان پڑھے لکھے طبقے کو اپني طرف متوجہ کرنے کے لیے سوشل میڈیا کا سہارا لیا تو کسی نے سیکورٹی خدشات کے سبب۔ سوشل میڈیا کا استعمال انتخابات کے نتائج پر کس حد تک اثر انداز ہوا، اس پر لوگوں کي رائے ملي جلي ہے۔

اب ديکھنا يہ ہے کہ مستقبل ميں بھي کسی سیاسی تبدیلی يا پھر حکومت کي کارکردگي پر نظر رکھنے کے ليے پاکستان ميں سوشل میڈیا کيا کردار ادا کر سکے گا؟ اسی کا جائزہ لاہور سے نامہ نگار شمائلہ جعفری نے لیا ہے۔

حصہ چہارم

اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

دور دراز علاقوں سے ایک تو خبر ہی مشکل سے آتی ہے۔آتی بھی ہے تو اکثر بری خبر ہی ہوتي ہے۔ شايد اسی لیے رسول پور جیسے گاؤں، 99 فیصد شرح خواندگی اور زیرو جرائم کا ریکارڈ رکھنے کے باوجود سنسنسی زدہ میڈیا کے لیے خبر کا درجہ نہیں رکھتے۔

تو پھر چلیں جنوبی پنجاب کے ہزاروں دیہاتوں کے درمیان بسے ِاسی بے خبر رسول پور کا احوال جاننے۔۔۔

اسی بارے میں