اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

’پاڑہ چنار میں ماحول بالکل سنسان ہے‘

کرم ایجنسی، پاکستان کے قبائلی علاقوں میں واحد شیعہ اکثریتی علاقہ ہے جہاں حالیہ برسوں میں فرقہ وارانہ تشدد میں اضافہ ہوا ہے۔ مقامی آبادی ماضی میں پاکستانی طالبان کی کارروائیوں کے خلاف بھی اپنی مدد آپ کے تحت منظم ہو کر اپنا دفاع کرتی رہی ہے جبکہ تھل پاڑہ چنار شہر بند رہنے کی وجہ سے یا تو ہوائی جہاز کے ذریعے یا پھر افغانستان کے راستے پاکستان کے دوسرے علاقوں تک سفر کرتی رہی ہے۔ تازہ بم حملوں کے بعد علاقے کے لوگ کس طرح کے خدشات سے دوچار ہیں، یہی جاننے کے لیے اسلام آباد میں ہمارے ساتھی احمد رضا نے پاڑہ چنار کے رہائشی نثار حسین بنگش سے بات کی جو محکمہ تعلیم سے وابستہ رہے ہیں اور ان دنوں انجمن حسینہ کے جوائنٹ سیکریٹری ہیں۔