اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

نیٹو سپلائی کی معطلی اور امریکی وزیر دفاع کا دورہ پاکستان

پاکستان کے قبائلی علاقوں میں ڈرون حملوں اور تحریک انصاف کی جانب سے نیٹو سپلائی کی معطلی کے بعد امریکہ کی جانب سے پاکستان حکومت سے پہلا اعلیٰ سطحی رابطہ کیا گیا ہے اور سیکریٹری دفاع چک ہیگل پاکستان پہنچے ہیں۔ وزیرِ اعظم پاکستان میاں نواز شریف نے امریکی وزیر دفاع چک ہیگل سے ملاقات کے دوران یہ عندیہ دیا ہے کہ نیٹو افواج کو رسد کی سپلائی کے راستے میں حائل تمام رکاوٹیں دور کی جائیں گی۔ پاکستان سے نیٹو سپلائي کے دو روٹ ہیں۔ ایک درہ خیبر سے ہوتا ہوا افغانستان کے ساتھ طورخم بارڈر سے جاتا ہے جبکہ دوسرا بلوچستان اور افغانستان کی سرحد چوکي چمن پر ہے۔ پی ٹی آئی نے خیبر پختونخوا سے ہو کر طورخم جانے والی سپلائی روکی ہے۔ دوسری طرف نیٹو سپلائی کے رکنے سے افغانستان میں امریکی فوجی تو متاثر ہوئے ہی ہیں لیکن اِس سے وہ افراد بھی متاثرہو رہے ہیں جن کا روزگار ان کنیٹینرز اور ٹرکوں سے وابستہ ہے۔ ریاض سہیل کی رپورٹ۔