اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

کیا پاک افغان تعاون ممکن ہے؟

سانحہ پشاور کے بعد، پاکستان کي فوج کے سربراہ جنرل راحيل شريف نے کل افغانستان کا ہنگامي دورہ کيا ، فوجي ذرائع کے مطابق انہوں نے ملک ميں جاري شدت پسندي ميں ملوث ايسے افراد کي معلومات ، افغان حکام کے ساتھ شيئر کي ، جو افغانستان سے کارروائياں منظم کر رہے ہيں۔ ليکن ماضي کي تلخيوں کي موجودگي ميں کيا تعاون ممکن بھي ہے؟ اسلام آباد سے عامر احمد خان