اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

’پاکستانی حکومت کرپشن منی واپس نہیں لانا چاہتی‘

تصویر کے کاپی رائٹ AFP

بی بی سی کو معلوم ہوا ہے کہ دنیا کی سب سے بڑے بینکوں میں سے ایک، ایچ ایس بی سی نے دنیا بھر میں اپنے مالدار کھاتیداروں کو کروڑوں پاؤنڈز کا ٹیکس چوری کرنے میں مدد کی۔ بی بی سی کے پروگرام پینوراما نے دنیا کے 203 ملکوں کے ایک لاکھ چھ ہزار کھاتیداروں کی دستاویزات دیکھی ہیں جو 2007 میں ایک خفیہ ذریعے نے افشاء کی تھیں۔ ایچ ایس بی سی نے تسلیم کیا ہے کہ بعض افراد نے غیراعلانیہ کھاتے رکھنے کی بینک کی رازداری کا فائدہ اٹھایا مگر اسکا کہنا ہے کہ اب یہ پالیسی بنیادی طور پر تبدیل ہوچکی ہے۔

صحافیوں کی ایک عالمی ٹیم کی تحقیق کے مطابق ایچ ایس بی سی کے سوئٹزرلینڈ میں واقع پرائیوٹ بینک کے لیک ہونے والے اکاونٹس میں پاکستان دنیا کے سب سے زیادہ ڈالر اکاؤنٹ رکھنے والے ممالک میں 48ویں نمبر پر آیا ہے۔

پاکستان سے کروڑوں ڈالرز کی رقم ترسیل ہوتی رہی ہے پاکستان سے اس عمل کے تفصیل سمجھنے کے لیے عنبر خیری نے ڈاکٹر اکرام الحق سے بات کی ۔ (ڈاکٹر اکرام الحق جو کہ ایک کتاب اور کئی تحقیقی مقالوں کے مصنف ہیں)