اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

’اسرائیل ترکی پائپ لائن، تبدیلی کا بڑا اشارہ ہے‘

ایک اسرائیلی اہلکار کے مطابق اسرائیل اور ترکی میں تعلقات کو معمول پر لانے کے لیے ابتدائی معاہدہ طے پا گیا ہے۔ دونوں ممالک کے درمیان تعلقات اُس وقت خراب ہوگئے تھے جب سنہ 2010 میں اسرائیلی بحریہ نے غزہ کے محاصرے کے دوران ترکی کی جانب سے آنے والے امدادی جہاز پر حملہ کر دیا تھا۔ حملے میں دس ترک امدای کارکن ہلاک ہوئے تھے۔ ساتھ ہی ترکی نے اسرائیل سے گیس خریدنے کے منصوبے سے متعلق معاہدے پر بھی کام شروع کر دیا ہے۔ خطے میں تیل اور گیس کے معاملات پر ماہر سینئر صحافی راشد حسین سے ہمارے ساتھی عمر آفریدی نے پوچھا کہ کیا یہ روس اور ترک تعلقات میں حالیہ کشیدگی کے مدنظر محض ایک سیاسی حربہ ہے یا واقعی ایک معاشی منصوبہ ہے۔