اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

اوکاڑہ میں مزارعین کے خلاف طاقت کا استعمال

اوکاڑہ میں مزارعوں کی زرعی اصلاحات اور ملکیت کے حقوق کی تحریک گزشتہ 16 سال سے چلی آ رہی ہے۔ یہ علاقے کی وہ زرخیز زمین ہے جس کی ملکیت تو ماہرین کے مطابق پنجاب حکومت کی ہے ، لیکن سترہ ہزار ایکڑ سے زیادہ رقبے پر فوج کے زیر ملکیت فارمز ہیں جبکہ مزارعے ایک صدی سے اس زمین کو آباد رکھے ہوئے ہیں۔

حال ہی میں درجنوں مزارعین کو دہشت گردی کے مقدمات میں گرفتار کیا گیا اور ان کو احتجاج کرنے سے جبری طور پر روکا جا رہا ہے۔

انسانی حقوق کے اداروں نے اس عمل کی مذمت کی ہے کہ غریب مزارعوں کو دبانے کے لیے انسداد دہشت گردی کے قوانین کو ہتھیار بنایا جا رہا ہے۔ ان مزارعوں کی کیا کہانی ہے ؟ اوکاڑہ سے جائزہ لیا ہے صبا اعتزاز نے