’پنجاب میں سیاسی بنیادوں پر گیس کنکشن دیے جا رہے ہیں‘

مراد علی شاہ
Image caption وزیرِ اعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے لکھا ہے کہ سیاسی بنیادوں پر کنکشن کی فراہمی سے بددلی پیدا ہوتی ہے اور یہ قومی ہم آہنگی کے لیے نقصان دہ ہے

سندھ کے وزیرِ اعلیٰ مراد علی شاہ نے وزیرِ اعظم نواز شریف کو خط لکھ کر ان کے سوئی گیس کے منصوبوں کی توسیع کے فیصلے پر تنقید کی ہے جس میں بقول ان کے زیادہ تر منصوبے پنجاب کو دیے گئے ہیں۔

منگل کے روز لکھے جانے والے اس خط میں وزیرِ اعلیٰ سندھ نے کہا ہے کہ پنجاب گیس کی ملکی پیداوار کا صرف تین فیصد پیدا کرتا ہے لیکن اس کا خرچ 42 فیصد ہے۔

انھوں نے کہا ہے کہ 37 ارب ڈالر کے یہ منصوبے آئین کی شق 158 کی صریح خلاف ورزی ہیں کیوں کہ اس شق کے مطابق پیداوار کا بڑا حصہ اس صوبے کو ملے گا جہاں کنویں واقع ہیں۔

وزیرِ اعلیٰ نے خط میں لکھا ہے کہ سوئی سدرن سندھ میں یہ کہہ کر گیس کے نئے کنکشن فراہم نہیں کر رہی کہ ان پر وفاقی حکومت کی جانب سے پابندی عائد ہے۔

مراد علی شاہ نے لکھا ہے کہ سیاسی بنیادوں پر کنکشن کی فراہمی سے بددلی پیدا ہوتی ہے اور یہ قومی ہم آہنگی کے لیے نقصان دہ ہے۔

انھوں نے وزیرِ اعظم پر زور دیا ہے کہ وہ سوئی گیس کے محکمے کو ہدایت دیں کہ وہ سندھ کو ترجیحی بنیادوں پر گیس کی فراہمی کو یقینی بنائے۔

متعلقہ عنوانات