نیپال میں پاکستانی فوج کے سابق افسر لاپتہ، تحقیقات کا آغاز

تصویر کے کاپی رائٹ HABIB ZAHIR (FACEBOOK)

پاکستانی دفترخارجہ کے ترجمان نفیس ذکریا نے سابق فوجی افسر کرنل (ر)حبیب ظاہر کی گمشدگی کی تصدیق کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس معاملے کی تحقیقات کے لیے نیپالی حکومت کے ساتھ رابطہ کیا گیا ہے۔

واضح رہے کہ پاکستانی فوج کے ایک سابق افسر لیفٹننٹ کرنل ریٹائرڈ محمد حبیب ظاہر نیپال کے علاقے لمبینی سے چھ اپریل کو مبینہ طور پر لاپتہ ہو گئے تھے۔

نامہ نگار فرحت جاوید کے مطابق ترجمان نفیس ذکریا نے بتایا ہے کہ کھٹمنڈو میں پاکستانی سفارتخانہ نیپالی حکومت سے رابطے میں ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ اس حوالے سے کرنل (ر)حبیب ظاہر کے اہلخانہ کے ساتھ بھی رابطہ کیا گیا ہے۔

دوسری جانب نیپال کے دفتر خارجہ کے ترجمان بھارت راج پوڈل کے مطابق انھیں پاکستان کی جانب سے باقاعدہ طور پر ’پاکستانی فوج کے سابق افسر' کے لاپتہ ہونے کی اطلاع دی گئی ہے۔

بی بی سی نیپالی سروس سے بات کرتے ہوئے بھارت راج پوڈل نے بتایا کہ پاکستان کی جانب سے اطلاع ملنے کے بعد سے اس معاملے کی تحقیقات کا آغاز کر دیا گیا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ 'ہم نے وزارت داخلہ اور محکمہ پولیس کو واقعے کی تحقیقات کی ہدایت جاری کر دی ہے۔‘

کرنل (ر)حبیب ظاہر فوج سے 2014 میں ریٹائرڈ ہونے کے بعد سے فیصل آباد میں ملازمت کر رہے تھے۔ چند ماہ قبل انھوں نے اپنا سی وی لنکڈان اور اقوام متحدہ کی ویب سائٹ پر اپ لوڈ کیا تھا۔

پاکستانی اداروں کی جانب سے حبیب ظاہر کی ای میلز پر کی گئی ابتدائی تحقیقات کے مطابق انھیں مارچ میں ’سٹارٹ سولوشنز‘ نامی ویب سائٹ سے ایک ریکروٹر مارک تھامسن نے ای میل کے ذریعے ساڑھے تین ہزار سے ساڑھے آٹھ ہزار ڈالر کی تنخواہ پر نائب صدر اور زونل ڈائریکٹر (سیکیورٹی) کی پیشکش کی گئی۔

تصویر کے کاپی رائٹ HABIB ZAHIR (FACEBOOK)

انھیں ملازمت کنفرم کرنے کے لیے کھٹمنڈو آنے کو کہا گیا اور عمان ایئرلائن کی بزنس کلاس کی ٹکٹ بھی بھجوائی گئی۔

کرنل (ر)حبیب ظاہر چھ اپریل کو نیپال میں لمبینی پہنچے اور فیملی کو مطلع بھی کیا تاہم اس کے بعد ان کا اہلخانہ سے کوئی رابطہ نہیں ہوا۔

اہلخانہ کی جانب سے سوشل میڈیا پر جاری کیے گئے پیغام میں کہا گیا ہے کہ ابتدائی تحقیقات کے مطابق رابطہ کیے جانے والے فون نمبرز اور یہ ویب سائیٹ انڈیا سے ہوسٹ کی جا رہی تھی جو اب بند ہے۔

پاکستانی دفتر خارجہ کے ترجمان نفیس ذکریا کا کہنا ہے کہ 'انڈین ہائی کمشنر سے اس بارے میں کوئی رابطہ نہیں کیا گیا جبکہ اس معاملے پر مزید پیش رفت پیر کو ہو گی۔‘

لمیبینی نیپال کے ضلع روپندیہی میں واقع ہے جو انڈیا کے علاقے سونالی سے تقریباً پانچ کلو میٹر یا ایک گھنٹے کی مسافت پر ہے۔

متعلقہ عنوانات