پاڑہ چنار کے متاثرین کا احتجاج جاری
اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

پاڑہ چنار دھماکوں کے خلاف مقامی قبائل کا احتجاجی دھرنا ساتویں دن بھی جاری ہے۔

پاکستان میں وفاق کے زیرانتظام قبائلی علاقے کرم ایجنسی کے صدر مقام پاڑہ چنار میں ہونے والے دھماکوں کے بعد مقامی قبائل کی طرف سے دیا جانے والا احتجاجی دھرنا ساتویں دن بھی جاری ہے۔ پاڑہ چنار کی طوری مارکیٹ میں گذشتہ جمعے کو ہونے والے دو دھماکوں میں اڑسٹھ افراد ہلاک ہوئے تھے۔ وزیراعظم کی جانب سے ہلاک ہونے والوں کے لواحقین کو دس، دس لاکھ جبکہ زخمیوں کو پانچ پانچ لاکھ بطور زرِ تلافی دینے کا اعلان کیا گیا ہے تاہم دھرنے کے شرکا نے زرِ تلافی کی یہ پیشکش مسترد کر دی ہے۔ پاڑہ چنار میں جاری دھرنے سے اظہارِ یکجہتی کے لیے دارالحکومت اسلام آباد سمیت ملک کے متعدد شہروں میں بھی دھرنوں اور اجتجاجی جلوسوں کا انعقاد کیا گیا ہے۔ اسلام آباد میں نامہ نگار ہارون رشید نے بھی احتجاجی کیمپ کا دورہ کیا۔

متعلقہ عنوانات