نجی چینل صحافی کو تنخواہ دے: عدالتی حکم

تصویر کے کاپی رائٹ
Image caption ابصار عالم کا مقدمہ صحافیوں کے حقوق کے لیے تاریخی ہے: پرویز شوکت

صوبائی دارالحکومت لاہور کی ایک عدالت نے ایک پاکستانی نجی نیوز چینل کی انتظامیہ کو ادارے کے سابق ڈائریکٹر ابصار عالم کے تمام واجبات بمعہ منافع ادا کرنے کا حکم دیا ہے۔

سول جج سید فہیم شاہد نے اپنے حکم میں کہا کہ دنیا نیوز ٹی وی ادارے کے سابق ڈائریکٹر کو انکم ٹیکس ادائیگی کا سرٹیفیکیٹ بھی جاری کریں۔

عدالت کے اس فیصلے کا ابصار عالم سمیت دیگر پاکستانی صحافیوں نے خیرمقدم کرتے ہوئے اسے ملک میں صحافیوں کے حقوق کے لیے تاریخی قرار دیا ہے۔

پاکستان فیڈرل یونین آف جرنلسٹس کے صدر پرویز شوکت نے صحافیوں کے حقوق کے لیے کام کرنے والے کارکنوں کے لیے اس فیصلے کو سنگ میل قرار دیا۔

پاکستانی صحافی طلعت حسین نے بھی اس عدالتی فیصلے کا خیر مقدم کیا اور کہا ’ہم بہت خوش ہیں کہ ایک عرصے سے چلے آنے والے اس متنازع مسئلے کا منصفانہ فیصلہ سامنے آیا ہے۔ یہ یومِ آزادی صحافت کا خیرمقدم کرنے کا بہترین طریقہ ہے۔‘

جس مقدمے کا فیصلہ یوم آزادی صحافت کے موقعے پر سنایا گیا وہ سنہ دو ہزار نو میں صحافی اور اس وقت دنیا نیوز کے ڈائریکٹر نیوز ابصار عالم نے لاہور کے ایک سول کورٹ میں دائر کرایا تھا۔ اس مقدمے کے تحت ابصار عالم کو دنیا نیوز سے مستعفیٰ ہونے کے بعد ان کے واجبات ادا نہیں کیے گئے تھے۔

اسی بارے میں