کراچی: احمدیوں پر حملے، ایک ہلاک

آخری وقت اشاعت:  جمعـء 7 ستمبر 2012 ,‭ 01:04 GMT 06:04 PST
کراچی میں پولیس(فائل فوٹو)

جمعہ کو احمدی جماعت کو غیر مسلم قرار دینے کو اڑتیس سال مکمل ہوں گے

پاکستان کے صوبہ سندھ میں احمدی جماعت سے تعلق رکھنے والے افراد پر حملوں میں ایک شخص ہلاک اور ایک زخمی ہوگیا ہے۔

یاد رہے کہ جمعہ کو احمدی جماعت کو غیر مسلم قرار دینے کو اڑتیس سال مکمل ہوں گے۔

کراچی کے علاقے لیاری میں چاکیواڑہ کے قریب فائرنگ میں راؤ عبدالغفار نامی شخص پر فائرنگ کی گئی جس میں وہ ہلاک ہوگئے۔ بعد میں مقتول کی لاش سول ہپستال منتقل کی گئی ہے۔ ہپستال انتظامیہ کے مطابق مقتول کو دو گولیاں لگی جن میں سے ایک گولی گردن سے پار ہوگئی ہے۔

احمدیہ جماعت کراچی کے رہنما مقصود احمد خان نے بی بی سی کو بتایا ہے کہ راؤ عبدالغفار بلدیہ کالونی کے رہائشی اور استاد تھے۔ ان دنوں وہ لیاری میں واقع شام کی شفٹ کے سکول میں تعینات تھے۔

مقصود احمد نے راؤ عبدالغفار کی ہلاکت کو ٹارگٹ کلنگ کا نتیجہ قرار دیا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ پولیس کو واقعے کی اطلاع دے دی گئی ہے اور وہ میت احمدیہ جماعت کے مرکز ربوہ لے جا رہے ہیں۔

دوسری جانب نوابشاہ میں مقامی زمیندار علوی پر فائرنگ کی گئی ہے، جس کے دوران انہیں دو گولیاں لگیں اور وہ زخمی ہوگئے جو اس وقت مقامی ہپستال میں زیر علاج ہیں۔

احمدیہ جماعت کے رہنما مقصود احمد خان کے مطابق دو سال قبل زخمی علوی کے بڑے بھائی حنیف پر اسی طرح حملہ کیا گیا تھا، جس میں وہ ہلاک ہوگئے تھے۔

انہوں نے بتایا کہ کراچی کے علاقے اورنگی میں دو ماہ قبل ان کے ساتھی نعیم گوندل کو فائرنگ کرکے ہلاک کیا گیا، اسی طرح سانگھڑ میں جماعت کے سینئر رکن پیر حبیب الرحمان ایک حملے میں ہلاک ہوئے۔ مقصود احمد خان کے مطابق کے بعد حملوں کا سلسلہ وقفے وقفے سے جاری ہے۔

یاد رہے کہ پاکستان حکومت نے سات ستمبر 1974 کو احمدی برادری کو قانون سازی کرکے غیر مسلم قرار دیا تھا، جمعہ کو اس قانون سازی کو اڑتیس سال مکمل ہوں گے۔

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔