اسلام آباد میں احتجاج، سکیورٹی کے لیے فوج طلب

آخری وقت اشاعت:  جمعرات 20 ستمبر 2012 ,‭ 14:43 GMT 19:43 PST

پاکستان کے دارالحکومت اسلام آباد کی انتظامیہ نے پیغمبرِ اسلام کے بارے میں امریکہ میں بننے والی توہین آمیز فلم کے خلاف احتجاج کے پیش نظر سکیورٹی کے لیے فوج کو طلب کر لیا ہے۔ جمعرات کے روز اسلام آباد میں سارا دن مختلف مقامات پر پولیس اور طلبا کے درمیان جھڑپیں ہوئیں۔ یہ طلبا بعد میں شہر کے ریڈزون تک پہنچنے میں کامیاب ہو گئے۔

واضح رہے کہ پیغمبرِ اسلام کے بارے میں امریکہ میں بننے والی توہین آمیز فلم کے خلاف پاکستان کی مذہبی جماعتوں نے جمعہ کو احتجاج کی کال دی ہوئی ہے۔

اسلام آباد کے کمشنر طارق پیرزادہ نے اسلام آباد کے ریڈ زون کی سکیورٹی کے لیے پاک فوج کو طلب کیا ہے۔ اسلام آباد کے ریڈ زون میں ایوانِ صدر، وزیر اعظم ہاؤس، سیکرٹیریٹ، پارلیمنٹ اور سپریم کورٹ کے علاوہ ڈپلومیٹک انکلیو بھی واقع ہے۔

حکومتِ پاکستان نے بدھ کو متنازع فلم پر جمعہ یعنی اکیس ستمبر کو ’یومِ عشقِ رسول‘ منانے کے لیے عام تعطیل کا اعلان کیا ہے۔

دوسری جانب اسلام آباد پولیس کے افسر محمد اقبال نے امریکی خبر رساں ایجنسی اے پی کوبتایا کہ جمعرات کو مظاہرین کی تعداد تقریباً ایک ہزار ہے اور ان میں زیادہ تر طلبہ ہیں۔

پولیس نے مظاہرین کو روکنے اور منتشر کرنے کےلیے آنسو گیس اور ربر کی گولیوں کا استعمال کیا۔

ہزاروں طلبا نے ہاتھوں میں لاٹھیاں اور پلے کارڈز اٹھا رکھے تھے اور وہ امریکہ کے خلاف نعرے لگا رہے تھے۔

ریڈزون کے حفاظتی اقدامات کی نگرانی کرنے والے ایس ایچ او کوہسار تھانہ خالد مسعود اکرم نے جمعہ کو احتجاج کے حوالے سے بی بی سی کو بتایا کہ مظاہرین کو روکنے کے لیے کنٹینرز رکھ دیے گئے ہیں۔ ’اگر مظاہرین نے مزاحمت کی تو اس کا جواب دینے کا بھی انتظام ہے۔‘

ریڈیو پاکستان کے مطابق مظاہرین اور پولیس میں جھڑپیں چارگھنٹے جاری رہیں اور بعد میں پولیس اور علماء کے درمیان مذاکرات کے بعد مظاہرین پیچھے ہٹ گئے اور پولیس نے حراست میں لیےگئے افراد کو رہا کر دیا۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔