خیبر ایجنسی: دھماکے میں چار ’شدت پسند‘ ہلاک

آخری وقت اشاعت:  منگل 9 اکتوبر 2012 ,‭ 10:39 GMT 15:39 PST
خیبر ایجنسی میں ماضی میں ہونے والا ایک دھماکے کے بعد کا منظر(فائل فوٹو)

خیبر ایجنسی میں کچھ عرصے سے مسلسل شدت پسندوں اور امن رضاکاروں کے درمیان جھڑپیں جاری ہیں

پاکستان کے قبائلی علاقے خیبر ایجنسی میں حکام کے مطابق تیراہ کے مقام پر شدت پسندوں کے ایک ٹھکانے میں دھماکے سے چار شدت پسند ہلاک ہوئے ہیں۔

مقامی لوگوں کا کہنا ہے کہ نری بابا کے مقام پر امن لشکر کے سات رضا کاروں کی لاشیں ملی ہیں۔

پولیٹکل انتظامیہ کے عہدیداروں نے بی بی سی کو بتایا ہے کہ کالعدم تنظیم لشکر اسلام کے تیراہ میں خزانہ مورچہ کے قریب ٹھکانے میں دھماکہ ہوا۔ اس دھماکے کی وجہ معلوم نہیں ہو سکی تاہم سرکاری عہدیداروں کا کہنا ہے کہ اس دھماکے میں چار شدت پسند ہلاک ہوئے ہیں۔

پشاور میں ہمارے نامہ نگار کے مطابق مقامی لوگوں نے بتایا کہ وادی تیراہ میں نری بابا کے مقام پر سات افراد کی لاشیں ملی ہیں جن کے بارے میں کہا جا رہا ہے کہ ان کا تعلق حکومت کی حمایتی تنظیم توحید الاسلام سے تھا۔ لوگوں کا کہنا ہے کہ ان افراد کو کچھ عرصہ پہلے اغواء کیا گیا تھا۔

تیراہ کے مقام پر کالعدم تنظیم لشکرِ اسلام اور زخہ خیل امن تنظیم توحید الاسلام کے درمیان کچھ عرصہ سے جھڑپوں کا سلسلہ جاری ہے، لیکن چند روز سے ایک دوسرے کے پاس قید افراد کی لاشیں پھینکی جا رہی ہیں۔

لنڈی کوتل سے سرکاری افسر نے بتایا کہ ان کے پاس اب تک سرکاری سطح پر ان سات افراد کی ہلاکت کی اطلاع نہیں پہنچی لیکن دو ہفتے پہلے توحید الاسلام سے تعلق رکھنے والے ایک اہم کمانڈر غنچہ گل اور ان کے ایک ساتھی کی لاش بازار میں پھینک دی گئی تھی۔

غنچہ گل اور ان کے ساتھی کو تقریباً ڈیڑھ سال پہلے نامعلوم افراد نے اغواء کر لیا تھا اور بظاہر یہ الزام لشکر اسلام پر عائد کیا گیا تھا۔ ان کا کہنا تھا کہ اس واقعہ کے بعد سے علاقے میں کشیدگی بڑھ گئی ہے۔

مقامی لوگوں کے مطابق اس واقعہ کے بعد توحید الاسلام نے لشکر اسلام سے تعلق رکھنے والے چار افراد کو قتل کر کے ان کی لاشیں پھنک دی تھیں۔ دو روز پہلے کالعدم تنظیم کی جانب سے پانچ اور منگل کی صبح سویرے یہ سات لاشیں تیراہ میں نری بابا کے مقام پر ملی ہیں۔

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔