کراچی: تشدد کے واقعات میں آٹھ ہلاک

آخری وقت اشاعت:  ہفتہ 10 نومبر 2012 ,‭ 15:08 GMT 20:08 PST

کراچی کے علاقوں گلشن اقبال اور نارتھ ناظم آباد میں بھی فائرنگ کے دو مختلف واقعات میں آٹھ افراد ہلاک اور تین زخمی ہوئے ہیں۔

کراچی ایسٹ کے ڈی آئی جی شاہد حیات نے بی بی سی کے نامہ نگار جعفر رضوی کو بتایا کہ گلشن اقبال کے ایک مدرسے کے قریب ایک ہوٹل پر فائرنگ سے زخمی ہونے والے کئی افراد میں سے پانچ اب تک ہلاک ہو چکے ہیں۔

گلشن اقبال کے مکینوں کا کہنا ہے کہ مدرسے کے قریب اس ہوٹل پر فائرنگ سے زخمی ہونے والے افراد کی تعداد نو تھی جن پانچ افراد کی ہلاکت کی تصدیق ہو چکی ہے۔ متعدد زخمیوں کی حالت نازک بتائی جا رہی ہے۔

ادھر نارتھ ناظم آباد میں بھی فائرنگ کے دو مختلف واقعات میں تین افراد ہلاک ہوئے ہیں۔

کراچی ویسٹ کے ڈی آئی جی جاوید اوڈھو نے بی بی سی سے بات کرتے ہوئے تصدیق کی کہ دو مختلف واقعات میں تین افراد مارے گئے ہیں۔

پہلا واقع نارتھ ناظم آباد کے بلاک جی میں سیفی کالج کے قریب ہوا جہاں ایک موٹر سائیکل پر سوار نامعلوم افراد نے محمد اسلم اور طارق نامی دو افراد کو ہلاک کردیا۔ ان افراد کا تعلق ایک ہفت روزہ سے بتایا جاتا ہے۔

ڈی آئی جاوید اوڈھو کا کہنا ہے کہ یہ یقین سے نہیں کہا جاسکتا کہ دونوں واقعات میں ہلاک ہونے والے افراد فرقہ وارانہ تشدد کا نشانہ بنے۔

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔