پاکستان: دو ٹریفک حادثے، چوبیس ہلاک

آخری وقت اشاعت:  ہفتہ 24 نومبر 2012 ,‭ 05:05 GMT 10:05 PST

پاکستان میں ٹریفک حادثات معمول کی بات ہے اور دھند کے باعث ان میں اضافہ ہو جاتا ہے۔

پاکستان کے صوبہ خیبر پختون خوا کے ضلع کرک میں انڈس ہائی وے پر مسافر کوچ اور ٹرالر کے درمیان تصادم کے نتیجے میں سولہ افراد ہلاک اور تیس زخمی ہوگئے جبکہ صوبہ سندھ کے شہر دادو کے قریب حادثے میں آٹھ افراد ہلاک اور چھ زخمی ہو گئے۔

پاکستان کے سرکاری ٹی وی کے مطابق پہلا حادثہ انڈس ہائی وے پر ضلع کرک کے علاقے سپینہ بانڈہ کے قریب پیش آیا جس کے نتیجے میں سولہ افراد ہلاک اور تیس سے زائد افراد زخمی ہوگئے۔ سرکاری ٹی وی کے مطابق مسافر کوچ کراچی سے پشاور آ رہی تھی۔

زخمی افراد کو کرک کے ضلعی ہسپتال میں منتقل کیا جا رہا ہے۔

اسی طرح صوبہ سندھ کے شہر دادو میں ایک مسافر کوچ جو عزہ داروں کو لے جارہی تھی حادثے کا شکار ہو گئی جس کے نتیجے میں آٹھ افراد ہلاک ہو گئے۔

ہلاک ہونے والوں میں دو خواتین اور دو بچے بھی شامل ہیں۔

پاکستان میں ٹریفک حادثات معمول ہیں مگر سردی کی آمد کے ساتھ دھند کی وجہ سے ٹریفک حادثات میں اضافہ ہو جاتا ہے۔

کچھ عرصہ قبل بہاولپور بائی پاس کے قریب ایک ٹریفک حادثے میں چوبیس افراد ہلاک ہو گئے تھے جن میں زیادہ تعداد خواتین اور نچوں کی تھی۔ یہ حادثہ ایک مسافر وین سامنے سے آنے والے ٹرک کے ساتھ ٹکرا گئی تھی۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔