’پی ٹی آئی کے بغیر حکومت بنائیں گے‘

Image caption تحریک انصاف کے قائدین بھی حکومت سازی کے عمل میں سرگرم ہیں

صوبہ خیبرپختونخوا میں جمعیت علمائے اسلام سے تعلق رکھنے والے سابق وزیر اعلی خیبر پختونخوا اکرم خان درانی نے کہا ہے کہ وہ دیگر تمام جماعتوں کے ساتھ مل کر ایک مضبوط حکومت قائم کریں گے جس میں تحریک انصاف شامل نہیں ہوگی۔

انھوں نے کہا کہ تحریک انصاف کا جمہوری حق ہے کہ وہ حکومت سازی کرے اور اپنے ساتھ اراکین کو ملائے لیکن ہم بھی اپنے طور پر کوششیں کر رہے ہیں۔ ان کہنا تھا کہ دو روز میں یہ واضح ہو جائے گا کہ ما سوائے تحریک انصاف کے باقی تمام سیاسی جماعتیں بشمول اے این پی اور پی پی پی ایک ساتھ بیٹھی ہوں گی۔

انھوں نے بی بی سی سے بات کرتے ہوئے کہا کہ جمعیت علمائے اسلام کے پاس صوبے کو درپیش تمام مسائل کا حل موجود ہے۔

اکرم درانی کے مطابق اگر یہاں کمزور حکومت ہوگی تو وہ اس صوبے کو درپیش مسائل حل نہیں کر سکے گی ۔ درانی کے مطابق مرکز اور صوبے میں ہم آہنگی ہونی چاہیے تاکہ یہاں امن و امان کے حوالے سے ایسے مسائل ہیں جن کا تعلق قبائلی علاقوں سے ہے او اس کا حل کسی اور کے پاس نہیں ہے بلکہ صرف مولانا فضل الرحمان کے پاس ہے۔

اکرم درانی نے اپنی گفتگو میں یہ ذکر بھی کیا ہے کہ یہاں ایسی حکومت ہونی چاہیے جو پڑوسی ملک کے ساتھ اچھے تعلقات رکھ سکے۔

اس کے علاوہ تحریک انصاف کے قائدین بھی حکومت سازی کے عمل میں سرگرم ہیں اور مختلف سیاسی جماعتوں سے رابطے کیے گئے ہیں۔ تحریک انصاف کے سینیئر رہنما پرویز خٹک نے گذشتہ روز اور جماعت کے صوبائی صدر اسد قیصر نے لاہور میں جماعت کے چیئرمین عمران خان سے ملاقات کی ہے۔

ان ملاقاتوں میں حکومت سازی پر بات چیت ہوئی ہے اور عمران خان کو تمام رابطوں کے بارے میں بتایا گیا ہے۔ ان مذاکرات میں جماعت کی جانب سے پارلیمانی لیڈر کے تعیناتی پر بات چیت ہوئی ہے لیکن اب تک کوئی واضح بیان جماعت کی طرف سے جاری نہیں ہوا ہے۔

جماعت اسلامی اور آفتاب احمد خان شیرپاؤ کی جماعت قومی وطن پارٹی اب تک یہ واضح اعلان نہیں کر پائے کہ وہ حکومت سازی کے لیے کس جماعت کا ساتھ دیں گے۔

ادھر انتخابات میں کامیاب ہونے والے آزاد اراکین بھی اب تک یہ طے نہیں کر سکے کہ آیا وہ کسی جماعت میں شامل ہوں یا وہ انفردی طور پر آزاد رکن کی حیثیت سے اسمبلی میں اپنا کردار ادا کریں اور یا وہ کسی جماعت میں شمولیت کا اعلان کردیں۔

خیبر پختونخوا میں کوئی بھی جماعت حکومت سازی کے لیے واضح اکثریت حاصل نہیں کر پائی تاہم پاکستان تحریک انصاف سب سے زیادہ نشتیں جیتنے والی جماعت کے طور پر سامنے آئی ہے۔

اسی بارے میں