پشاور: فائرنگ میں ایک اہل کار ہلاک، چار زخمی

Image caption یونیورسٹی ٹاؤن شہر کا مصروف اور اہم علاقہ سمجھا جاتا ہے جہاں اہم دفاتر واقع اور ہسپتال واقع ہیں

خیبر پختونخوا کے دارالحکومت پشاور میں ٹارگٹ کلنگ کے دو الگ الگ واقعات میں ایک حوالدار ہلاک اور ایک انسپیکٹر سمیت چار اہل کار زخمی ہو گئے ہیں۔

پشاور میں یونیورسٹی ٹاؤن کے علاقے میں نامعلوم افراد نے ناکے پر تعینات پولیس اہل کاروں پر فائرنگ کی جس میں ایک حوالدار محمد نثار ہلاک جبکہ سپاہی نوید اکبر اس حملے میں زخمی ہو گئے۔

یونیورسٹی ٹاؤن شہر کا مصروف اور اہم علاقہ سمجھا جاتا ہے جہاں اہم دفاتر واقع اور ہسپتال واقع ہیں۔

دوسرا واقعہ رنگ روڈ پر پہاڑی پورہ کے علاقے میں پیش آیا۔ پولیس کے مطابق انسپیکٹر عبدالحمید خان دو اہل کاروں سمیت گھر سے تھانے کی طرف جا رہے تھے کہ راستے میں چادر لپیٹے ایک شحص نے ان پر فائرنگ کر دی۔

فائرنگ کے نتیجے میں انسپیکٹر عبدالحمید شدید زخمی ہوئے ہیں۔ پولیس کا کہنا ہے کہ دیگر دو اہل کاروں کو ٹانگوں پر زخم آئے ہیں اور ان کی حالت خطرے سے باہر ہے۔

اس سے پہلے سوموار کے روز دو علیحدہ علیحدہ واقعات میں تین پولیس اہل کار ہلاک ہو گئے تھے۔

دو اہل کار ریگی ماڈل ٹاؤن کے قریب ایک دیسی ساختہ بم کے دھماکے میں ہلاک ہوئے تھے۔ ان میں ایک اہل کار کا تعلق ایف سی سے تھا۔

اس طرح اسی روز ایک اور واقعے میں ایک ہسپتال کے سامنے ڈیوٹی پر تعینات پولیس اہل کار کو نامعلوم افراد نے فائرنگ کر کے ہلاک کردیا تھا۔ یہ واقعہ بالا ماڑی پولیس تھانے کی حدود میں پیش آیا تھا۔

اسی بارے میں