عمر اکمل کے خلاف کوئی مقدمہ درج نہیں کیا گیا: پولیس

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption عمر اکمل کی شادی سابق ٹیسٹ کرکٹر عبدالقادر کی بیٹی سے ہو رہی ہے

لاہور پولیس نے اس بات کی تردید کی ہے کہ پاکستان کرکٹ ٹیم کے کھلاڑی عمر اکمل کی مہندی کے موقعے پر کسی قسم کی قانون شکنی کی وجہ سے ان کے خلاف مقدمہ درج کیا گیا ہے۔

خیال رہے کہ منگل اور بدھ کی درمیانی رات عمر اکمل کی مہندی کی تقریب کے بعد مقامی میڈیا پر زبردست واویلا ہوا تھا کہ ان پر ایک بار پھر مقدمہ درج کر دیا گیا ہے۔

لاہور کے تھانہ ہیئر کے سب انسپکٹر شیر محمد نے بی بی سی کو بتایا کہ عمر اکمل یا ان کے خاندان کے کسی بھی اور شخص پر کوئی مقدمہ درج نہیں کیا گیا۔

انھوں نے بتایا کہ البتہ دفعہ 188 کے تحت فارم ہاؤس کے مالک اور کیٹرنگ سروس کے مالک اور ان کے دو ملازمین کے خلاف مقدمہ درج کیا گیا ہے اور سعید اور اعظم نامی دونوں ملازمین کو حراست میں لے لیا ہے۔

عمر اکمل بدھ کو پاکستان کے سابق ٹیسٹ کرکٹر اور گگلی کے بادشاہ عبدالقادر کی بیٹی کے ساتھ رشتۂ ازدواج میں بندھ رہے ہیں۔ ان کی مہندی کی تقریب مقامی ٹی وی چیلنوں پر اس طرح پیش ہوئی کہ جیسے وقت کی پابندی اور شادی پر ایک کھانا دینے کی پابندی کے خلاف عمر اکمل پھر سے پولیس کے زیر عتاب آ گئے ہیں، تاہم یہ درست خبر نہ نکلی۔

عمر اکمل پر ایشیا کپ میں حصہ لینے کے لیے بنگلہ دیش جانے سے پہلے ایک ٹریفک وارڈن سےجھگڑا کرنے پر مقدمہ درج ہوا تھا، تاہم بعدازاں ٹریفک پولیس نےان کے والد کی جانب سے معافی مانگنے پر یہ مقدمہ واپس لیا تھا۔

اسی بارے میں