امریکی ایجنٹ کی ضمانت پر رہائی کا حکم

تصویر کے کاپی رائٹ afp
Image caption ایف بی آئی ایجنٹ جوئل کوکس کو پیر کے روز کراچی کے جناح انٹرنیشنل ایئرپورٹ پر نائن ایم ایم پستول کی پندرہ سے زائد گولیاں سمیت گرفتار کیا تھا

کراچی کی ایک عدالت نے امریکہ کے وفاقی تحقیقاتی ادارے ایف بی آئی کے ایجنٹ جوئل کوکس کو ضمانت پر رہا کرنے کا حکم دیا ہے۔

جوئل کوکس کو پیر کو کراچی کے جناح انٹرنیشنل ایئرپورٹ پر نائن ایم ایم پستول کی پندرہ سے زائد گولیاں سمیت گرفتار کیا گیا تھا۔

جس کے بعد ان کے خلاف سندھ آرمز ایکٹ کے تحت مقدمہ درج کیا گیا تھا اور جوڈیشل مجسٹریٹ ملیر نے انھیں چار روزہ ریمانڈ پر پولیس کے حوالے کر دیا تھا۔

امریکی اہلکار کو جمعرات کو ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج ملیر کی عدالت میں پیش کیا گیا تو ان کے وکیل نے موقف اختیار کیا کہ ان کے موکل کسی مجرمانہ کارروائی میں ملوث نہیں رہے اور ان سے صرف میگزین اور گولیاں برآمد ہوئی ہیں خودکار ہتھیار نہیں۔

وکیل کا کہنا تھا کہ ایف آئی آر میں شامل دفعات قابل ضمانت ہیں، لہذا ان کے موکل کی ضمانت منظور کی جائے اور وہ مقدمے کا سامنا کریں گے۔

اس پر حج نے دس لاکھ روپے کے زرِ ضمانت کے عوض انھیں ضمانت پر رہا کرنے کا حکم دیا۔

اس سے قبل امریکی وزارت خارجہ نے تصدیق کی تھی کہ پیر کو کراچی کےانٹرنیشنل ایئرپورٹ سے اسلحہ سمیت گرفتار ہونے والا امریکی شہری ایف بی آئی کا ایجنٹ ہے۔

جوئل کراچی سے اسلام آْباد جا رہے تھے کہ سکیننگ کے دوران ان کے بیگ میں گولیاں پائی گئیں۔

اس سے قبل امریکی ذرائع ابلاغ نے سرکاری ذرائع کے حوالے سے لکھا ہے کہ کراچی ایئرپورٹ سےگرفتار ہونے والے امریکی شہری ایف بی آئی کے ایجنٹ ہیں جو عارضی طور پر پاکستان میں تعینات تھے۔

اسی بارے میں