کیتھے پیسیفک کی کراچی آنے والی پرواز منسوخ

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption 12 تاریخ کو کیتھے پیسیفک کی کراچی سے ہانگ کانگ کے لیے پرواز بھی منسوخ کر دی گئی ہے

پاکستان کے شہر کراچی کے بین الاقوامی ہوائی اڈے پر شدت پسندوں کے حملے کے بعد غیر ملکی ایئر لائن کیتھے پیسیفک نے اپنی ہانگ کانگ سے کراچی اور کراچی سے ہانگ کانگ کی پرواز منسوخ کرنے کا اعلان کیا ہے۔

ایئر لائن کی ویب سائٹ پر کہا گیا ہے کہ کراچی ایئر پورٹ پر حالیہ حملے کے مدِ نظر 11 تاریخ کو ہانگ کانگ سے کراچی آنے والی پرواز منسوخ کر دی گئی ہے۔

ایئر لائن نے مزید کہا ہے کہ اسی طرح 12 تاریخ کو کیتھے پیسیفک کی کراچی سے ہانگ کانگ کے لیے پرواز بھی منسوخ کردی گئی ہے۔

کیتھی پیسیفک نے کہا ہے کہ وہ کراچی کے ہوائی اڈے کا سلامتی کے نقطۂ نظر سے جائزہ لے رہی ہے۔

واضح رہے کہ کراچی کے بین الاقوامی ہوائی اڈے جناح انٹرنیشنل پر آٹھ جون کو دس شدت پسندوں نے حملہ کیا تھا جس پر سکیورٹی فورسز نے کارروائی کی اور پانچ گھنٹے کے آپریشن کے بعد ایئرپورٹ کو کلیئر قرار دیا گیا تھا۔

ہوائی اڈے پر حملہ مقامی وقت کے مطابق رات کے تقریباً ساڑھے دس بجے کے قریب کیا گیا۔ صورتِ حال کو قابو میں لانے کے لیے فوج نے بھی رینجرز اور سکیورٹی فورسز کی مدد کی۔

دوسری جانب ہانگ کانگ کی حکومت نے بھی اپنے شہریوں کو پاکستان جانے سے پرہیز کرنے کا مشورہ دیا ہے۔

اس سفری ایڈوائزری میں کہا گیا ہے کہ کراچی ایئر پورٹ پر حالیہ حملے کے باعث بہتر ہے کہ کراچی نہ جایا جائے۔

ہانگ کانگ نے پاکستان کو ’بڑے خطرے‘ کے درجے میں رکھا ہے۔ حکومت کا کہنا ہے کہ بہتر ہے کہ پاکستان جانے کے منصوبے پر نظرثانی کریں اور اگر ہو سکتا ہے تو نہ جائیں۔

اسی بارے میں